site
stats
پاکستان

مودی کا دماغی توازن درست نہیں،رحمان ملک

اسلام آباد: سابق وفاقی وزیرداخلہ سینیٹر رحمان ملک کا کہنا ہےکہ بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کا دماغی توازن ٹھیک نہیں انہیں علاج کی ضرورت ہے۔

تفصیلات کےمطابق رحمان ملک کا پارلیمنٹ کے باہر میڈیا سے گفتگوکرتے ہوئے کہنا تھا کہ راہول گاندھی سےکہوں گاکہ وہ مودی کوسیلفی وزیراعظم کہنےکے بجائے سیلفش وزیراعظم کہیں۔

پیپلزپارٹی کے رہنما رحمان ملک نےکہاکہ نریندر مودی کا ذہنی توازن درست نہیں اگر ان کا علاج بھارت میں نہیں تو میں ڈاکٹر بھیج سکتا ہوں۔

مزید پڑھیں: گوگل نے بھارت کو’نمک حرام‘ قرار دے دیا

انہوں نے کہا کہ یہ امر باعث تشویش ہے کہ امریکہ پاکستان کی قربانیوں کے نتیجےمیں بھارت کو نوازرہاہے،ایک وقت تھاجب مودی کو امریکہ نے دہشت گرد قراردیا تھا او آج وہ اس کا دوست بن گیا ہے۔

رحمان ملک کامزید کہنا تھا کہ مودی کی پالیساں بھارت اور خطےکے لیے بہت بڑا خطرہ ہیں،ہمیں اس خطرےکا سد باب کرنا ہوگا،بھارت کی پارلیمنٹ اور اپوزیشن کو مودی کے خلاف قرار داد عدم اعتماد لانا چاہیے۔

 

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top