The news is by your side.

Advertisement

حکومت کا مساجد اور نماز تراویح سے متعلق اہم اعلان

اسلام آباد: کرونا وبا کے باعث رمضان المبارک میں نماز تراویح کا اہتمام ہوگا یا نہیں؟ وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے مذہبی ہم آہنگی نے واضح کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق مولانا طاہر اشرفی نے اسلام آباد میں نیوز کانفرنس کرتے ہوئے بتایا کہ کرونا وبا کی پہلی لہر کے دوران ہم نے پچھلے سال بھی مساجد کو کھلے رکھا، پاکستان کے حالات پہلے سے بہتر ہیں، اس سال بھی فیصلہ کیا ہے کہ رمضان المبارک میں مساجد کھلی رہیں گی اور ایس اوپیز کیساتھ نماز تراویح کی ادائیگی بھی ہوگی۔

مولانا طاہر اشرفی نے کہا کہ پروپیگنڈا کیا جارہا ہے کہ حکومت مساجد بند کرنے جارہی ہے، اس طرح کا کوئی اقدام زیر غور نہیں ہے، دیگر ممالک کے نسبت سب سے زیادہ پاکستان کی مساجد میں ایس او پیز پر عمل کیا گیا ہے، ایک بار پھر عوام الناس سے اپیل ہے کہ عبادات کے دوران احتیاطی تدابیر استعمال کرے۔

اپنی نیوز کانفرنس میں معاون خصوصی برائے مذہبی ہم آہنگی نے اہم اعلان کیا کہ وزیر اعظم نے سعودی عرب کےدورے کی دعوت قبول کی ہے، مستقبل قریب میں سعودی عرب دورے پر جائیں گے۔

مولانا طاہر اشرفی نے بتایا کہ وزیراعظم اور سعودی ولی عہد کے درمیان ٹیلی فونک رابطے میں سعودی ولی عہد نے اعلان کیا کہ 40ارب درخت مشرقی وسطی میں لگائیں گے جس پر وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ گرین پاکستان پر بھی مل کر آگے چلیں گے۔

ملک میں بڑھتی مہنگائی پر وزیراعظم کے معاون خصوصی نے موقف اپنایا کہ حکومت مصنوعی مہنگائی کو کنٹرول کرے گی، وزیراعظم کا بہت سارا وقت اس پر گزرتا ہے کہ مہنگائی کیسے کم کریں، ملک میں بہت سے امور میں بہتری آئی ہے اور بہت سارے معاملات بہتر ہوئے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں