خطرناک اسٹنٹ کرتے ہوئے دو افراد کا سیڑھیاں چڑھنے کا مظاہرہ
The news is by your side.

Advertisement

خطرناک اسٹنٹ کرتے ہوئے دو افراد کا سیڑھیاں چڑھنے کا مظاہرہ

ہنوئی: ویتنام کے دو بھائیوں نے خطرناک اسٹنٹ کرتے ہوئے سیڑھیاں چڑھنے کا شاندار مظاہرہ پیش کیا۔

غیرملکی میڈیا کے مطابق پیبلو اور جوئیل نامی دو بھائیوں نے خطرناک اسٹنٹ کرتے ہوئے سیڑھیاں چلنے کا عالمی ریکارڈ قائم کردیا ایک بھائی نے دوسرے بھائی کو  سر پر بیلنس کیا اور سیڑھیآں چڑھنا شروع کردیں۔

توازن کا ناقابل یقین مظاہرہ پیش کرتے ہوئے اس نوجوان نے نہ صرف اپنے ساتھی کو سر پر بیلنس رکھا بلکہ اس دوران 97 سیڑھیاں چڑھ کر عالمی ریکارڈ بھی قائم کردیا۔

اس موقع پر پیبلو اور جوئیل نے اپنا نام گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں درج کروالیا اور حاضرین کو دنگ کردیا۔

اس سے قبل اس خطرناک اسٹنٹ کا ریکارڈ جرمنی  کے پاس تھا جہاں دو کرتب بازوں نے 90 سیڑھیاں عبور کی تھیں۔

گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈ کی انتظامیہ نے اسٹنٹ کے لیے مشہور فلم گیم آف تھرون کی لوکیشن کا انتخاب کیا جہاں دونوں بھائیوں نے شاندار اسٹنٹ کا مظاہرہ محض 52 سیکنڈ میں طے کیا۔

گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں اپنا نام درج کروانے پر دونوں بھائیوں کا کہنا تھا کہ کامیابی سے قبل متعدد مرتبہ پریکٹس کی گئی جس میں ہم ناکام رہے تاہم ہمت نہیں ہاری اور جدوجہد جاری رکھی جس کے سبب کامیابی ملی۔

پیبلو اور جوئیل کا کہنا تھا کہ ہم نے یہ ثابت کردیا ہے کہ انسان کی صلاحیتیں محدود نہیں ہے لگن اور محنت ہو تو کٹھن مرحلہ بھی آسان ہوسکتا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں