The news is by your side.

Advertisement

آتش فشاں پہاڑ نے پھر لاوا اگل دیا، ویڈیو میں خوفناک مناظر

میلان : اٹلی میں آتش فشاں پہاڑ ماؤنٹ "ایٹنا ” ایک بار پھر لاوا اگلنے لگا ہے، آتش فشاں سے رات بھر لاوے کا اخراج جاری رہا۔

آتش فشاں کے پھٹنے کا واقعہ 10 فروری کو پیش آیا، دھماکے کی تصاویر اب آن لائن شیئر کی گئی ہیں، ماضی میں بھی وہ کئی مرتبہ لاوا اور راکھ اگل چکا ہے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق دھماکے سے راکھ اور دھوئیں کے بادل 8 سے 10 کلومیٹر تک اونچائی پر پھیلے۔

اس سلسلے سے اطالوی میڈیا نے حکام کے حوالے سے بتایا ہے کہ لاوے کے اخراج سے قریبی رہائشی علاقوں کو کوئی خطرہ نہیں ہے، ماؤنٹ ‘ایٹنا’ کو یورپ کا سب سے متحرک آتش فشاں پہاڑ سمجھا جاتا ہے اور یہ جزیرہ سِسیلی کے ساحل پر واقع ہے۔

ماؤنٹ اینٹا نامی یہ آتش فشاں پہاڑ کئی دہائیوں سے متحرک ہے اور وقفے وقفے سے راکھ اُگل رہا ہے جو اس پہاڑ کی چوٹی سے آسمان کی بلندی تک جا رہی ہے۔

A volcanic thunderstorm over Mt. Etna, Sicily, Italy, generates volcanic lightning during an eruption, early Friday, Feb. 11, 2022. Colliding particles of volcanic ash generate static electricity that discharges within the volcanic plume. (AP Photo/Emilio Messina)

سسلی کے ساحل پر واقع 3350 میٹر کے ایٹنا ماؤنٹ سے زمین سے آگ اُگلنے اور لاوا بہنے کے مناظر دلکش منظر ترتیب دے رہے ہیں جس سے خارج ہوتی ہوئی راکھ نے قریبی علاقے کو مکمل طور پر ڈھک لیا ہے۔

نیشنل انسٹی ٹیوٹ برائے جیو فزکس اینڈ وولکینولوجی کے مطابق اگرچہ پھٹنے سے راکھ اور دھوئیں کے بادل 8 سے 10 کلومیٹر تک آسمان پر پھیلے، لیکن اس سے کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔

ادارے کا مزید کہنا ہے آتش فشاں پھٹنے کا مرکز جنوب مشرقی گڑھا تھا، جو تقریباً 2,900 میٹر کی بلندی پر واقع ہے۔ آتش فشاں سے پھوٹنے والے لاوے کی تصاویر مختلف نیوز ایجنسیوں کی جانب سے آن لائن شیئر کی گئی ہیں۔

واضح رہے کہ ماؤنٹ مارسیلی نامی پہاڑ نیپلز کے جنوب میں تقریباً 175 کلو میٹر کے فاصلے پر واقع ہے۔ اس کی اونچائی تین ہزار میٹر ہے اور اس کی چوڑائی نیچے سے اوپر تک 70 کلو میٹر سے 30 کلو میٹر تک وسیع ہے۔

مارسیلی پورے یورپ میں سب سے بڑا ایکٹو والکینو یعنی فعال آتش فشاں ہے اور تعجب کی بات یہ ہے کہ آپ اسے دیکھ نہیں سکتے۔

 

Comments

یہ بھی پڑھیں