The news is by your side.

Advertisement

وفاقی وزیر خالد مقبول صدیقی کی گاڑی ایم کیو ایم پاکستان کے مرکز سے چوری

کراچی: متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) پاکستان کے سربراہ اور وفاقی وزیر انفارمیشن ٹیکنالوجی ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی کی نئی ڈبل کیبن گاڑی چوری ہوگئی۔

تفصیلات کے مطابق ایم کیو ایم پاکستان کے کنوینر اور وفاقی وزیر خالد مقبول کی نئی گاڑی منگل کی صبح 8 بجے ایم کیو ایم پاکستان کے بہادرآباد مرکز سے چوری کی گئی، ایف آئی آر درج کرادی گئی ہے۔

خالد مقبول صدیقی کی گاڑی بہادر آباد مرکز کے باہر کھڑی تھی یہ گاڑی ایم کیو ایم پاکستان کی فلاحی تنظیم خدمت خلق فاؤنڈیشن کے نام پر رجسٹرڈ ہے اور اسے کچھ عرصے قبل ہی خریدا گیا تھا۔

بہادر آباد مرکز کے باہر لگے کیمروں کی فوٹیج حاصل کرتے ہوئے گاڑی کی تلاش شروع کردی گئی

پولیس کی جانب سے بہادر آباد مرکز کے باہر لگے کیمروں کی فوٹیج حاصل کرتے ہوئے گاڑی کی تلاش شروع کردی گئی ہے۔

یاد رہے کہ ایم کیو ایم پاکستان کی رابطہ کمیٹی نے فروری 2018 میں ڈاکٹر فاروق ستار کو پارٹی کنوینر شپ سے ہٹا کر خالد مقبول صدیقی کو نیا سربراہ مقرر کیا تھا۔

خالد مقبول صدیقی ایم کیو ایم پاکستان کے کنوینر کے ساتھ وفاقی وزیر انفارمیشن ٹیکنالوجی بھی ہیں اور وہ 2018 کے عام انتخابات میں کراچی سے قومی اسمبلی کے حلقہ 255 سے کامیاب ہوئے تھے۔

خیال رہے کہ کراچی میں چوری اور ڈکیتی کی وارداتوں میں اضافہ ہوا ہے، عید یا کوئی تہوار قریب آتے ہی ان وارداتوں میں اضافہ ہوجاتا ہے اور پولیس اسٹریٹ کرائم اور چوری کی وارداتوں میں قابو پانے میں ناکام نظر آتی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں