The news is by your side.

Advertisement

بھارتی مسلمان محمد اخلاق کا قتل : گھرسے ملنے والا گوشت بکرے کانکلا

نئی دہلی : بھارت میں گائے کا گوشت کھانے کے شبے میں ہلاک کئے جانے والے مسلمان کے گھرسے ملنے والا گوشت بکرے کانکلا،فرانزک رپورٹ نے تصدیق کردی۔

تفصیلات کے مطابق بھارت میں مسلمانوں کوبے گناہی کی سزاجان دینے کی صورت میں بھگتنا پڑرہی ہے۔

گائے کا گوشت کھانے کے شبے میں انتہاپسندہندوؤں نے بے قصورمسلمان اخلاق کوتشدد کرکے قتل کردیا لیکن ان کے گھرسے ملنے والے گوشت کی فرانزک رپورٹ نے اخلاق کی بے گناہی ثابت کردی۔

گوشت گائے کا نہیں بلکہ بکرے کا تھا۔ جبکہ اسپتال میں زیر علاج محمداخلاق کے صاحبزادے دانش کی حالت اب خطرے سے باہر ہے۔

علاوہ ازیں مقبوضہ کشمیراسمبلی کے باہرگائے کے گوشت پرپابندی کیخلاف مظاہرہ کرنے والے بھی پولیس تشددکانشانہ بن گئے۔

رکن اسمبلی انجینئرراشد کواسمبلی کے اندربی جے پی ارکان کی غنڈہ گردی سہنی پڑی تو اسمبلی کے باہرپولیس کا لاٹھی چارج اورپھرگرفتاری بھی دینا پڑی۔

مودی سرکارکی دوغلی پالیسی کا واضح ثبوت ہے کہ ایک جانب گائے کے گوشت پرپابندی تودوسری جانب مودی سرکارکے پہلے ہی سال ڈالرکمانےکی خاطر گائے کے گوشت کی برآمد میں پندرہ فیصد سے بھی زیادہ اضافہ ہوا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں