افسران آتے جاتے رہتے ہیں، نظام پر کوئی اثر نہیں پڑتا، مراد علی شاہ murad-ali-shah
The news is by your side.

Advertisement

افسران آتے جاتے رہتے ہیں، نظام پر کوئی اثر نہیں پڑتا، مراد علی شاہ

کراچی : وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ آئی جی سندھ کا معاملہ عدالت میں ہے اور پیپلز پارٹی نے ہمیشہ عدلیہ کا احترام کیا ہے اس لیے کوئی تبصرہ نہیں کروں گا تاہم افسران آتے جاتے رہتے ہیں اس سے نظام میں کوئی فرق نہیں پڑتا۔

یہ تبصرہ آج سیہون میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ کی برطرفی کے حوالے سے پوچھے گئے سوال کے جواب میں کیا۔

انہوں نے کہا کہ افسران آتے جاتے رہتے ہیں اس لیے نظام میں کوئی فرق نہیں پڑتا کیوں کہ نظام کامیابی سے اپنے امور کی انجام دہی میں مشغول ہے اور سندھ حکومت ایک نظام کے تحت چل رہی ہے کسی ایک شخص پر نہیں۔

درگاہ لعل شہباز قلندر کے دورے پر آئے وزیراعلیٰ سندھ نے بتایا کہ درگاہ کی سیکیورٹی کا خود جائزہ لیا ہے جس کے تحت عرس میں سیکیورٹی کےموثرانتظامات کیے جائیں گے۔

وزیراعلیٰ سندھ نے ایم کیو ایم کے وائٹ پیپر اور پی ایس پی کے دھرنوں پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ ایم کیوایم کے دونوں دھڑوں کو اپنے بانی کی کمی محسوس ہو رہی ہے جیسے بانی متحدہ نے نفرتیں پھیلائیں یہ لوگ بھی وہی کر رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ دونوں دھڑے اپنے بانی کا نام لینا پسند نہیں کرتے مگر طرز سیاست وہی اپنائی جا رہی ہے جب کہ وائٹ پیپر محض تعصب پرمبنی ہے اور اس میں کوئی سچائی نہیں ہے کیوں کہ ایم کیوایم پاکستان کو تو یہ بھی معلوم نہیں کہ سندھ میں 6 ڈویژن ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں