site
stats
خیبر پختونخواہ

خیبرپختونخوا، عوام سے 23 کروڑ لوٹنے والا اہلکار گرفتار

راولپنڈی: نیب نے راولپنڈی میں کارروائی کرتے ہوئے خیبرپختو نخوا کے عوام کو دھوکا دے کر 23 کروڑ روپے بٹورنے والے جعل ساز کو گرفتار کرلیا، حکام کے مطابق ملزم کو ابتدائی تحقیقات مکمل ہونے کے بعد گرفتار کیا گیا۔

اطلاعات کے مطابق قومی احتساب بیورو (نیب) نے راولپنڈی میں کارروائی کرتے ہوئے اے ٹی سی کے اہلکار ملزم چوہدری مسعود کو غیر قانونی اثاثے بنانے کے الزام میں گرفتار کرلیا۔

نیب اعلامیے کے مطابق ملزم چوہدری مسعود احمد نے ملازمت کے دوران اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے عوام کو دھوکا دے کر 23 کروڑ روپے سے زائد کی رقم بٹوری، ملزم پر عوام کے ساتھ دھوکا دہی کا بھی الزام ہے۔

نیب حکام کا کہنا ہے کہ ملزم اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے جعلی کاغذات تیار کر کے لوگوں کو غیرقانونی جائیدادیں فروخت کرتا تھا، گرفتار ملزم کے خلاف نیب نے ابتدائی تحقیقات مکمل کرلی ہیں۔

خیبر پختونخوا میں تعینات نیب کے ترجمان کا کہنا ہے کہ ملزم کو ریجنل نیب کے حوالے کردیا گیا او راُس سے مزید تحقیق جاری ہے، اس دوران اہم انکشافات متوقع ہیں۔

واضح رہے کہ نیب دھوکا دہی کے کیس میں پہلے بھی 9ملزمان کو گرفتار کرچکا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top