The news is by your side.

Advertisement

نیب کا محکمہ اطلاعات سندھ کے دفتر پر چھاپہ، اشتہارات کا ریکارڈ چیک

کراچی: قومی احتساب بیورو (نیب) نے محکمہ اطلاعات سندھ کے دفتر پر چھاپہ مارا جس کے دوران اشتہارات کا ریکارڈ چیک کیا گیا جبکہ ملازمین سے پوچھ گچھ بھی کی گئی۔

تفصیلات کے مطابق قومی احتساب بیورو (نیب) نے محکمہ اطلاعات سندھ کے دفتر پر چھاپہ مارا۔

کارروائی کے دوران نیب افسران نے ملازمین سے پوچھ گچھ کی جبکہ تمام غیر متعلقہ افراد کو باہر نکال دیا گیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ نیب افسران نے محکمہ اطلاعات میں اشتہارات کا ریکارڈ چیک کیا۔ اس دوران ملازمین سے اشتہارات کی فراہمی اور بجٹ پر سوال جواب کیے گئے۔

نیب نے محکمہ اطلاعات کا ریکارڈ جلنے کے باعث متبادل ریکارڈ چند روز پہلے ہی اکاؤنٹنٹ جنرل آفس سے حاصل کرلیا۔ محکمہ اطلاعات سندھ نے ریکارڈ سیپرا کو بھی فراہم نہیں کیا تھا جس کے باعث 5 سال کا ریکارڈ وفاقی ادارے سے حاصل کیا گیا۔

ذرائع کے مطابق ریکارڈ ملنے کے بعد تحقیقات کا دائرہ وسیع کیا گیا ہے۔

نیب کی چھاپہ مار کارروائی مکمل ہونے کے بعد نیب افسران سینکڑوں کی تعداد میں فائلیں اور باکسز ساتھ لے گئے۔

افسران نے ڈائریکٹر اشتہارات سمیت دیگر عملے سے بھی پوچھ گچھ کی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ڈمی اخباروں کے نام پر اربوں کے اشتہارات جاری کیے جاتے تھے۔

کارروائی کے بعد ڈائریکٹر انفارمیشن ایڈورٹائزمنٹ ذوالفقار شاہ کا کہنا تھا کہ نیب افسران مطلوبہ ریکارڈ کے لیے آئے تھے، نیب افسران نے جو طلب کیا ان کو فراہم کیا گیا ہے۔ نیب افسران ایک سے ڈیڑھ گھنٹے میں کارروائی کے بعد چلے گئے۔

انہوں نے کہا کہ نیب افسران سے اچھے ماحول میں بات ہوئی۔ نیب افسران 2015 سے 2018 تک کا ریکارڈ اور بل لے گئے۔

ذوالفقار شاہ نے کہا کہ میری تعیناتی مئی 2018 کو انفارمیشن ڈپارٹمنٹ میں ہوئی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں