The news is by your side.

Advertisement

مودی سرکار پر “بڑی ڈکیتی” کا الزام لگ گیا، وجہ سامنے آگئی

نئی دہلی : بھارت میں مودی حکومت کو پیٹرول، ڈیزل اور گیس کی قیمتوں میں بے تحاشا اضافے پر عوام کی جانب سے شدید تنقید کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔

بھارت میں اپوزیشن کی بڑی جماعت کانگریس مہنگائی سے متعلق مسلسل مودی حکومت پر حملہ کر رہی ہے اور آج  راہل گاندھی سمیت پارٹی کے کئی رہنماؤں نے ایل پی جی گیس سلنڈر کی بڑھتی قیمتوں پر اپنے شدید ردعمل کا اظہار کیا ہے۔

کانگریس رہنماؤں نے اس مہنگائی پر مودی حکومت کو “دی گریٹ رابری” (بڑی ڈکیتی) کا الزام عائد کرتے ہوئے اپنی کڑی تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔

اس حوالے سے کانگریس کے ترجمان جے ویر شیرگل نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر مودی حکومت پر تنقید کرتے ہوئے مہنگائی کے اس اقدام کو “دی گریٹ رابری” قرار دیا ہے۔ انہوں نے اپنے ایک ٹوئٹ میں لکھا ہےکہ عوام کو مہنگائی کے ایک اور “انجکشن کی خوراک” بی جے پی سے ملی ہے۔

سلنڈر کی قیمت میں ایک بار پھر 25 روپے کا اضافہ ہوا ہے۔ 2 مہینے میں یہ لگاتار چھٹی بار اضافہ ہوا ہے۔‘‘ ساتھ ہی انھوں نے یہ بھی لکھا کہ گیس، ڈیزل، پٹرول (جی ڈی پی) کی بڑھتی قیمتوں کو اب ’دی گریٹ رابری‘کہا جاسکتا ہے۔

راہل گاندھی نے بھی ایل پی جی گیس سلنڈر کی بڑھتی ہوئی قیمت کے بعد جو ٹوئٹ کیا ہے اس میں مودی حکومت پر حملہ آور انداز اختیار کرتے ہوئے لکھا گیا ہے کہ ایل پی جی سلنڈر کی قیمت پھر بڑھ گئی۔ عوام کے لیے مودی حکومت کے اختیارات ، کاروبار بند کرو،  چولہا پھونکو۔

Comments

یہ بھی پڑھیں