The news is by your side.

Advertisement

نوازشریف، مریم نواز اور صفدرکی پیرول پر رہائی کا وقت ختم ہونے میں چند گھنٹے باقی

اسلام آباد : سابق وزیراعظم نواز شریف،مریم نواز ، کیپٹن(ر)صفدرکی پیرول پررہائی کا وقت ختم ہونے میں چند گھنٹے باقی رہ گئے، تینوں مجرمان کوآج تین بجےتک اڈیالہ جیل منتقل کردیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق بیگم کلثوم نواز کے انتقال پر سابق وزیراعظم نوازشریف، ان کی صاحبزادی مریم نواز، کیپٹن(ر)صفدر کو دی جانے والی پیرول پر رہائی کی مدت آج ختم ہورہی ہے، تینوں قیدیوں کو دوبارہ اڈیالہ جیل منتقل کیا جائے گا۔

راولپنڈی اڈیالہ جیل منتقل کرنے کی تمام تیاریاں مکمل کرلی گئی ہے، تینوں مجرمان لاہور سے خصوصی طیارے میں اسلام آباد پہنچایا جائے گا، شہباز شریف اور دیگر پارٹی رہنما اڈیالہ جیل تک ساتھ جائیں گے۔

تینوں قیدیوں کو راولپنڈی ائیرپورٹ سے اڈیالہ جیل سخت سیکیورٹی میں لایا جائے گا۔

نوازشریف کی والدہ، چھوٹی بیٹی اسما، حسن،حسین نوازکی اہلیہ اوربچے جاتی امرا میں قیام کریں گی۔

گذشتہ روز بیگم کلثوم نواز کےسوئم میں سابق صدر آصف زرداری، بلاول بھٹو زرداری، چوہدری شجاعت حسین، مونس الہیٰ اور دیگر سیاسی رہنماؤں سمیت لوگوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔

آصف زرداری کا کہناتھا بلا شبہ بیگم کلثوم نوازنڈر خاتون تھیں،ان کی جد و جہد کو ملک یاد کرتا رہے گا، شریف خاندان اورن لیگ کے دکھ میں برابر کے شریک ہیں ۔

تکلیف اس بات کی ہےکہ آخری وقت بیمار بیوی کےساتھ نہ گزار سکا، نواز شریف

نواز شریف کا کہنا تھا کہ تکلیف اس بات کی ہےکہ آخری وقت بیمار بیوی کےساتھ نہ گزار سکا، پیپلز پارٹی کی قیادت کاشکرگزارہوں کہ دکھ میں ہماراساتھ دیا۔

یاد رہے 11 ستمبر کو بیگم کلثوم نواز کے انتقال کے بعد پنجاب حکومت کی جانب سے اڈیالہ جیل کے تینوں قیدیوں کو 12 گھنٹے کے لیے پیرول پر رہا کیا گیا تھا، جس کے بعد وہ جاتی امرا پہنچے، تاہم پیرول کی مدت میں توسیع کرتے ہوئے تین دن کیا گیا تھا اور جاتی امراء کو سب جیل قرار دیا گیا تھا۔

بعد ازاں سابق وزیرِ اعظم نواز شریف، ان کی صاحبزادی مریم اور داماد کیپٹن (ر) صفدر کی پیرول پر رہائی میں توسیع کرتے ہوئے مدت پانچ دن کر دی گئی تھی۔

خیال رہے سابق وزیراعظم نواز شریف کی اہلیہ بیگم کلثوم نواز طویل عرصہ برطانیہ میں زیرِ علاج رہنےکے بعد انتقال کرگئیں ، وہ طویل عرصے سے گلے کے سرطان میں مبتلا تھیں۔

واضح رہے احتساب عدالت کی جانب سے 6 جولائی کو ایون فیلڈ ریفرنس میں نواشریف کو 11، مریم نواز کو 8 اور کیپٹن صفدر کو ایک سال قید کی سزا سنائی گئی تھی۔

نوازشریف اور ان کی بیٹی مریم نواز 13 جولائی کو جب لندن سے وطن واپس لوٹے تو دونوں کو لاہور ایئرپورٹ پر طیارے سے ہی گرفتار کرکے اڈیالہ جیل منتقل کردیا گیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں