The news is by your side.

Advertisement

ناظم جوکھیو قتل کیس: پی پی رکن سندھ اسمبلی جام اویس 3 روزہ جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے

کراچی : مقامی عدالت نے ناظم جوکھیو قتل کیس میں پی پی رکن سندھ اسمبلی جام اویس کو تین روزہ جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کی ملیرکورٹ میں ملیرمیمن گوٹھ میں غیرملکیوں کو شکار سے روکنے پر نوجوان کے قتل کیس کی سماعت ہوئی ، پولیس نے ممبرصوبائی اسمبلی جام اویس کو عدالت میں پیش کیا۔

تفتیشی افسر نے عدالت کو بتایا کہ مقتول ناظم جوکھیو کے ورثا نے ایم پی اےجام اویس کونامزدکیاہے، ملزم جام اویس نےگزشتہ روزرضاکارانہ طورپرگرفتاری پیش کی، ملزم سے تفتیش،ساتھیوں سے متعلق معلومات کے لئے ریمانڈ دیا جائے۔

عدالت نےجام اویس گہرام کو3 روزہ جسمانی ریمانڈپرپولیس کےحوالے کرتے ہوئے آئندہ سماعت پر پیشرفت رپورٹ طلب کرلی۔

عدالت نے مزید 2ملزمان حیدر اور میرعلی کو بھی 3روزہ جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا، ملزمان حیدراورمیرعلی فارم ہاؤس کےملازم ہیں۔

یاد رہے مقتول ناظم نے غیر ملکیوں کو شکار سے روکنے کی ویڈیوسوشل میڈیا پراپلوڈکی تھی ، جس کے بعد مقتول ناظم کی تشددزدہ لاش ملیرمیمن گوٹھ سےملی تھی۔

ورثا نے الزام عائد کیا ہے کہ ایم پی اے کے مہمانوں کی ویڈیوسوشل میڈیاپر ڈالنے پر ناظم جوکھیو کو جام ہاؤس بلا کر قتل کیا گیا۔

خیال رہے ناظم جوکھیو قتل کیس کی تحقیقات کیلئےایس ایس پی ملیرعرفان بہادر کی سربراہی میں آٹھ رکنی جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم تشکیل دے دی گئی ہے، جو روزانہ کی بنیاد پر پیشرفت سے آگاہ کرے گی ۔

Comments

یہ بھی پڑھیں