The news is by your side.

فریقین میں صلح : نذیر چوہان کی ضمانت منظور

لاہور : ضمنی الیکشن میں ہنگامہ آراٸی کیس میں پی ٹی آٸی کے شبیر گجر اور نذیر چوہان میں راضی نامہ ہو گیا، عدالت نے نذیر چوہان کی ضمانت منظور کرلی۔

تفصیلات کے مطابق جوڈیشل مجسٹریٹ محمد آصف مصطفاٸی کے روبرو فاٸرنگ کیس میں چار روزہ جسمانی ریمانڈ کے بعد ن لیگی رہنما نذیر چوہان کو عدالت کے روبرو پیش کیا گیا۔

مدعی عادل محمود نے پیش ہو کر بیان دیا کہ ان کا راضی نامہ ہوگیا ہے لہٰذا ہمیں ضمانت منظور ہونے پر اعتراض نہیں تاہم عدالت نے قرار دیا کہ آج عدالتی تعطیل ہے ڈیوٹی جج کے طور پر ضمانت پر کاررواٸی نہیں کرسکتا۔

نذیر چوہان کے وکلا نے اس نکتے پر دلاٸل مکمل کیے جس کے بعد عدالت نے راضی نامہ کی بنیاد پر نذیر چوہان کی 50 ہزار کے مچلکے کے عوض ضمانت منظورکرلی۔

نذیر چوہان کو پولیس اپنے ساتھ جیل واپس لے گٸی، جہاں سے آج ہی انہیں رہا کیے جانے کا امکان ہے، پی ٹی آٸی کے ایم پی اے شبیر گجر بھی عدالت میں آٸے اور نذیر چوہان کو گلے لگا لیا۔

شبیر گجر کا کہنا تھا عمران خان نے کہا ہے کہ رواداری کا مظاہرہ کرو لہٰذا اللہ کے لیے معاف کردیا، وہ چاہتے ہیں کہ پاکستان کے لیے ساری سیاسی دشمنیاں ختم ہونی چاہییں۔

واضح رہے کہ عدالت نے ن لیگ کے رہنما نذیر چوہان کی ضمانت منظور کر تے ہوئے انہیں 50ہزار روپے کے مچلکے جمع کرانے کا حکم دیا ہے، جوڈیشل مجسٹریٹ محمد آصف مصطفیٰ نے نذیرچوہان کی ضمانت منظور کی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں