The news is by your side.

Advertisement

سورج کے ابلتے حصے کی نزدیک ترین تصاویر اور ویڈیوز سامنے آگئیں

نیویارک: ماہرین فلکیات نے سورج کے ابلتے حصے کی قریب ترین تصاویر اور تصاویر جاری کردیں جن کے سامنے آتے ہی دنیا بھر میں تہلکہ مچ گیا۔

سائنس یا انسانی تاریخ میں پہلی بار سورج کی سطح کی انتہائی تفصیلی تصاویر اور تفصیلات کی ویڈیو طاقت ور ترین شمسی دوربین کی مدد سے بنائی گئی ہے۔

ویڈیو اور تصویر میں سورج کی سطح پر موجود ابلتے ہوئے پلازما کو وضح طور پر دیکھایا گیا جبکہ اس کے روشن حصوں میں پلازما گرم ہوکر سورج سے اوپر اڑتا بھی نظر آرہا ہے۔

ماہرین فلکیات کے مطابق گہری رنگت کے نظر آنے والے پلازمے ٹھنڈے ہونے کے بعد نیچے کی طرف جارہے ہیں جبکہ دیگر جو روشن حصے میں ہیں وہ سورج کے انتہائی طاقتور میدان کو ظاہر کررہے ہیں۔

مذکورہ تصاویر اور ویڈیو امریکی شہر ہوائی کی ہیلیکالا پہاڑی پر نصب ایک دوربین کی مدد سے دس سال کی مسلسل محنت اور منصوبہ بندی کے بعد حاصل کی گئیں۔

رپورٹ کے مطابق امریکی پہاڑی پر 4 میٹر قطر کے آئینے والی ایک طاقتور شمسی دوربین نصب ہے، جو نیشنل سائنس فاؤنڈیشن کےتعاون سے  تیار کی گئی اور ماہرین نے اسے ’ڈینیئل کے انووی ٹیلی اسکوپ‘ کا نام دیا۔

تصویرمیں نظر آنے والا ایک خانہ 700 میل لمبا ہے جبکہ ویڈیو میں سورج پر گزرنے والے دس منٹ کا چکر بھی واضح طور پر دیکھا جاسکتا ہے۔ ماہرین کے مطابق ویڈیو میں نظر آنے والے حصہ زمین سے ڈیڑھ گنا بڑا ہے۔

نیشنل سائنس فاؤنڈیشن میں قومی شمسی تحقیقی پروگرام سے وابستہ ماہرِ طبیعیات، ویلنٹِن پیلٹ کہتی ہیں کہ ہم دوربین کی مدد سے سورج کی بیرونی پرتوں کو اچھی طرح سمجھ سکیں گے اور یہ بھی معلوم ہوسکے گا کہ سورج اور دیگر ستاروں کی ساخت کس طرح کی ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں