The news is by your side.

Advertisement

سعودی سیاحتی شعبہ، نئی شرائط

ریاض: سعودی عرب میں سیاحتی شعبے میں رہائشی مراکز کے لائسنس کے لیے نئی شرائط عائد کر دی گئیں۔

تفصیلات کے مطابق سعودی وزیر سیاحت احمد الخطیب نے سیاحتی مقامات پر ہوٹلوں اور فرنشڈ اپارٹمنٹس کے لیے ترمیمی بل کی منظوری دے دی۔

قانون کی بنیادی شرط کے مطابق سیاحوں کے لیے رہائشی امور کا لائسنس حاصل کرنے والا سعودی ہو اور ماضی میں کسی قسم کے اخلاقی جرائم میں سزا یافتہ نہ ہو۔

وزیر سیاحت کے مطابق قواعد میں اس تبدیلی کا مقصد سیاحتی شعبے میں سرمایہ کاری کرنے والوں کے حقوق کا تحفظ کرنا ہے۔

نئے قانون میں ’بوتیک ہوٹلز‘ میں معیاری سہولتوں کے علاوہ ہاسپٹل ہاسٹلز، فارم ہاؤسز، ون سٹار سے سکس سٹار تک کے ہوٹلوں اور سیاحتی مراکز کے لیے لائسنس کے حصول کے مراحل کو آسان بنایا گیا ہے تاہم بنیادی شرط سرمایہ کار کا سعودی ہونا ہے۔

سعودی عرب: غیر ملکی افراد کی نوکریوں سے متعلق اہم فیصلے

لائسنس کے حصول کی شرائط میں کی جانے والی تبدیلی کے بعد درخواست گزار کی ضرورت کے تحت اسے فوری اجازت جاری کرتے ہوئے 180 دن کی مہلت دی جائے گی، جس کے دوران وہ مطلوبہ اشیا فراہم کر سکتا ہے۔

سرمایہ کاروں کی سہولت کے لیے لائسنس کے حصول یا دیگر معاملات کی انجام دہی کے لیے ویب سائٹ بھی مخصوص کی گئی ہے، جہاں اپنی رائے اور شکایات سے مطلع کیا جا سکے گا۔

ترمیم شدہ بل میں مزید کہا گیا ہے کہ لائسنس حاصل کیے بغیر کسی کو بھی سیاحتی حوالے سے رہائشی سروسز فراہم کرنے کی اجازت نہیں ہو گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں