The news is by your side.

Advertisement

ایران کی مشکلات میں اضافہ، امریکا نے نئی پابندیاں عائد کردیں

واشنگٹن: ایران کی مشکلات میں مزید اضافہ ہوگیا، امریکا نے ایک بار پھر ایران پر نئی پابندیاں عائد کردیں۔

تفصیلات کے مطابق امریکی پابندیوں کے تناظر میں ایرانی معیشت سنگین بحران کا شکار ہوچکی ہے جبکہ موجودہ حکومت سے متعلق بھی عوام میں مایوسی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ امریکی پابندیاں بدستور جاری رہیں تو ایران مزید تنہا ہوسکتا ہے اور ملکی معیشت تباہ ہوسکتی ہے۔

امریکا نے ایسے پچیس افراد اور کاروباری اداروں کو ان پابندیوں کا نشانہ بنایا ہے، جو ایران کے ساتھ کاروبار جاری رکھے ہوئے تھے۔

پابندیوں کا شکار ہونے والی کاروباری شخصیات اور ادارے ایران سمیت ترکی اور متحدہ عرب امارات میں اپنی معاشی اور تجاری سرگرمیاں جاری رکھے ہوئے ہیں۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ ان پابندیوں کے بعد ایران مزید دباؤ کا شکار ہوجائے گا، موجودہ حالات میں ایران اور امریکا کے درمیان مذاکرات کے کوئی آثار نظر نہیں آرہے۔

خیال رہے کہ جن مالیاتی اداروں پر پابندیاں عائد کی گئی ہیں، ان میں انصار بینک، اطلس ایکسچینج اور ایران کی اطلس نامی ایک کمپنی بھی شامل ہیں۔

یورپی یونین کا ایران کے خلاف پابندیاں لگانے پر غور

رواں سال امریکا کی جانب سے جوہری معاہدے سے نکلنے اور ایران پر دوبارہ پابندیاں لگانے کے بعد سے یورپی یونین تہران کے ساتھ محتاط انداز میں معاملات چلا رہا تھا۔

حال ہی میں امریکا یورپی یونین کے کئی ممالک پر دباؤ ڈال رہا تھا کہ وہ بھی ایران پر اپنی جانب سے پابندیاں عائد کریں تاکہ کسی قسم کا کوئی کارروبار جاری نہ رکھا جائے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں