The news is by your side.

Advertisement

بچے کے نام میں ایسا کیا ہے جسے 50 ہزار افراد بھی دہرانے میں ناکام رہے

منیلا: دنیا کے ہر خطے میں والدین اپنے بچوں کے لیے اچھا نام رکھنے کی چاہت رکھتے ہیں، کچھ والدین منفرد ناموں کو ترجیح دیتے ہیں، لیکن فلپائن میں ایک بچے کو ایسا نام دیا گیا ہے جسے کوئی زبان سے ادا نہیں کر پا رہا ہے۔

کچھ دنوں قبل دنیا کے امیر ترین انسان ایل مسک نے اپنے بیٹے کا نہایت انوکھا نام X Æ A-Xii رکھا تھا، جس پر لوگوں نے خوب مذاق اڑایا کیوں کہ سبھی پریشان تھے کہ اس نام کو کیسے ادا کیا جائے۔

اب فلپائن کی ایک فیملی نے نوزائیدہ بچے کا بہت انوکھا لیکن نہایت مشکل ترین نام رکھا ہے، اس نام کی ادائیگی کی کوشش میں اب تک 50 ہزار سے زیادہ لوگ ناکام ہو چکے ہیں۔

27 اپریل کو پیدا ہوئے اس بچے کا نام اس کے دادا روغل فیرولن استریرا نے Ghlynnyl Hylhyr Yzzyghyl Mampuan Buscato رکھا ہے، یہ اتنا مشکل نام ہے کہ بچے کی پیدائش کا سرٹیفکیٹ بنانے والے سرکاری اہل کار نے اس کی ہجے میں متعدد مرتبہ غلطیاں کیں، جس کی وجہ سے اسے بار بار پرنٹ کیا گیا۔

غلینل ہلہائر یزیغل مامپوان بوسکاٹو کی ادائیگی اتنی مشکل ثابت ہو رہی ہے کہ دادا نے خود ہی لوگوں کی آسانی کے لیے اس سے بھی عجیب نک نیم (عرف) consonant رکھ دیا، کانسونینٹ بولی کی ایک آواز کو کہتے ہیں، جو vowel نہیں ہوتی۔

بچے کے والد کے دوست نے جب فیس بک پر بچے کا پیدائشی سرٹیفکیٹ اپ لوڈ کیا تو دیکھتے ہی دیکھتے اس پوسٹ کو 50 ہزار سے زیادہ مرتبہ شیئر کیا گیا۔

لوگ بچے کا نام ادا کرنے کی کوشش کر رہے ہیں لیکن کوئی بھی اس میں کامیاب نہیں ہو پایا، بچے کے والد کا کہنا ہے کہ جب ان کا بیٹا بڑا ہو جائے گا تب وہ اس کو اس کا نام لینا سکھائیں گے۔

واضح رہے کہ بچے کے والد کا نام Lhyrlon ہے، جب کہ بیٹے کا نام Ghlynnyl رکھا گیا ہے، بچے کے بڑے ہونے کے بعد اس کو نام کا مطلب اور ایسا نام رکھے جانے کی وجہ بتائی جائے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں