The news is by your side.

Advertisement

نومولود جڑواں بچوں کا نام کرونا اور کووڈ رکھ دیا گیا

نئی دہلی: بھارت میں کرونا وائرس کے لاک ڈاؤن کے دوران پیدا ہونے والے جڑواں بچوں کا نام کووڈ اور کرونا رکھ دیا گیا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق جڑواں بہن بھائی کی پیدائش رائے پور کے ڈاکٹر بی آر امبدکر میموریل اسپتال میں ہوئی، اسپتال ذرائع نے بھی بچوں کا مذکورہ نام رکھے جانے کی تصدیق کی ہے۔

چھتیس گڑھ سے تعلق رکھنے والے والدین پرینیتی اور ونے ورما کا کہنا ہے کہ انہوں نے اس مشکل وقت میں خوشی کا عنصر ڈھونڈنے کے لیے بچوں کا نام وائرس کے نام پر رکھا ہے۔

نومولود بچوں کی ماں پرینیتی کا کہنا ہے کہ کرونا وائرس جان لیوا تو ہے لیکن اس وائرس نے لوگوں کو احساس دلایا ہے کہ صفائی ستھرائی بے حد ضروری ہے۔

ان کے مطابق لاک ڈاؤن کی وجہ سے انہیں اسپتال پہنچنے میں بہت مشکل کا سامنا کرنا پڑا تھا، لاک ڈاؤن کے باعث ایمبولینس کو جگہ جگہ پولیس نے روکا تاہم ان کی حالت دیکھتے ہوئے ایمبولینس کو جانے دیا گیا۔

ڈلیوری کے لیے یہ جوڑا اسپتال میں آدھی رات کے وقت پہنچا تاہم اسپتال کا عملہ موجود تھا جس نے ان کے ساتھ تعاون کیا، دونوں بچوں کی پیدائش آپریشن کے ذریعے عمل میں لائی گئی۔

والدین کا کہنا ہے کہ ممکن ہے وہ اپنے بچوں کا نام بعد میں بدل دیں۔

خیال رہے کہ بھارت میں کرونا وائرس کے اب تک 3 ہزار 82 کیسز رپورٹ ہوچکے ہیں جبکہ وائرس سے ہلاکتوں کی تعداد 86 ہوگئی ہے۔

وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے ملک بھر میں 14 اپریل تک لاک ڈاؤن کا اعلان کیا گیا ہے اور اس کی پابندی کے لیے انتظامیہ سختی سے پیش آرہی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں