The news is by your side.

Advertisement

جام کمال کے خلاف تحریک عدم اعتماد اگلے 24 گھنٹوں میں متوقع

کوئٹہ: وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال کے خلاف تحریک عدم اعتماد اگلے 24 گھنٹوں میں متوقع ہے۔

تفصیلات کے مطابق بلوچستان عوامی پارٹی کے ناراض اراکین کے معاملے کوحل کرنے کے لیے اسپیکر عبدالقدوس بزنجو، جان محمد جمالی اور صالح بھوتانی اسلام آباد سے کوئٹہ کے لیے روانہ ہوگئے ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ بلوچستان عوامی پارٹی کے ناراض اراکین آج اہم بیٹھک کریں گے، اجلاس میں تمام قانونی کارروائی اور تمام پہلوؤں پر آئندہ کا لائحہ عمل طے کیا جائے گا۔

ذرائع نے بتایا کہ وزیر اعلیٰ جام کمال کے خلاف تحریک عدم اعتماد لانے کے لیے اگلے 24 گھنٹے اہم ہیں۔

واضح رہے کہ بلوچستان عوامی پارٹی کے ناراض اراکین ایک ہفتے قبل چیئرمین سینٹ کے ہمراہ اسلام آباد آئے تھے، ناراض اراکین کا کہنا ہے کہ وزیر اعلیٰ بلوچستان کے استعفے کے بغیر کوئی بات نہیں ہو سکتی۔

بلوچستان کے 3 ناراض وزرا کے استعفے منظور

دوسری طرف آج گورنر بلوچستان نے 3 صوبائی وزرا کے استعفے منظور کر لیے ہیں، بلوچستان حکومت سے ناراض وزرا نے 2 روز قبل استعفے گورنر کو پیش کیے تھے۔

استعفے دینے والوں میں اسد بلوچ، ظہور بلیدی اور سردار عبدالرحمان کھیتران شامل ہیں، وزرا کے استعفوں کی منظوری کا نوٹیفکیشن محکمہ ایس اینڈ جی اے ڈی جاری کرے گا۔

ذرائع گورنر ہاؤس نے بتایا کہ 4 پارلیمانی سیکریٹریز کے استعفے واپس کر دیے گئے ہیں، کیوں کہ آئین کے تحت پارلیمانی سیکریٹری کا استعفیٰ گورنر کو نہیں دیا جاتا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں