The news is by your side.

Advertisement

تحریک عدم اعتماد کا اہم ترین مرحلہ شروع

اسلام آباد : اپوزیشن کی جانب سے وزیراعظم عمران خان کے خلاف جمع کرائی گئی تحریک عدم اعتماد کا اہم ترین مرحلہ شروع ہوگیا ہے۔

ذرائع قومی اسمبلی سیکریٹریٹ کے مطابق اپوزیشن کی جانب سے جمع تحریک عدم اعتماد پر دستخط کی تصدیق کا عمل شروع کردیا گیا ہے، ممبران کے دستخط کی تصدیق کےبعد ارکان کو نوٹسز کا اجرا ہوگا۔

عدم اعتماد تحریک پر پاکستان پیپلزپارٹی، مسلم لیگ (ن)، عوامی نیشنل پارٹی (اے این پی)، بلوچستان نیشنل پارٹی (بی این پی) مینگل اور جمعیت علمائے اسلام (ف) کے ارکان نے دستخط کئے تھے، ان ارکان کی تعداد کم وبیش 80 کے قریب تھی۔

واضح رہے کہ اس وقت قومی اسمبلی میں تحریک عدم اعتماد کی کامیابی کے لیے اس کی حمایت میں 172 ووٹ درکار ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: اپوزیشن نے وزیراعظم عمران خان کے خلاف تحریک عدم اعتماد جمع کرادی

قومی اسمبلی کی ویب سائٹ کے مطابق پی ٹی آئی کو اپنے اتحادیوں سمیت 178 اراکین کی حمایت حاصل ہے، جن میں پی ٹی آئی کے 155 ارکان، ایم کیو ایم کے 7، بی اے پی کے 5، مسلم لیگ ق کے 5 ارکان، جی ڈی اے کے 3 اور عوامی مسلم لیگ کا ایک رکن شامل ہے۔

دوسری جانب حزب اختلاف کے کل ارکان کی تعداد 162 ہے، ان میں مسلم لیگ (ن) کے 84، پاکستان پیپلز پارٹی کے 57 ، متحدہ مجلس عمل کے 15، بلوچستان نیشنل پارٹی کے 4 جبکہ عوامی نیشنل پارٹی کا ایک رکن شامل ہے، اس کے علاوہ دو آزاد اراکین بھی اس اتحاد کا حصہ ہیں۔

یاد رہے کہ ریکوزیشن جمع کرانے کے بعد اسپیکر قومی اسمبلی 15 روز میں اجلاس بلانے کے پابند ہیں ، دوران اجلاس تحریک عدم اعتمادپر7دن میں کارروائی کرنا ہوگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں