The news is by your side.

Advertisement

کورونا سے متاثرہ ڈاکٹر فرقان کی موت، ایس آئی یو ٹی کا وضاحتی بیان جاری

کراچی : ایس آئی یو ٹی کے ترجمان نے کہا ہے کہ ڈاکٹرفرقان کی آمد سے متعلق انکوائری کی لیکن ڈاکٹر فرقان کے ایمرجنسی میں آنے کا کوئی ثبوت نہیں ملا۔

تفصیلات کے مطابق ڈاکٹرفرقان کی کوروناسے موت پر ایس آئی یو ٹی نے وضاحت جاری کردی ہے ، ترجمان نے کہا کہ ڈاکٹرفرقان کی آمدسےمتعلق انکوائری کی ، ایمرجنسی میں ڈاکٹر فرقان کے آنے کا کوئی ثبوت نہیں ملا۔

ایس آئی یو ٹی کے ترجمان کا کہنا تھا کہ ڈاکٹرفرقان کےکوروناریسیپشن پرآنے کا بھی ثبوت نہیں ملا، سینئرفیکلٹی ممبران سمیت عملےسےپوچھ گچھ کی گئی جبکہ کیمروں سےبھی ڈاکٹر فرقان کی آمد کے شواہد نہ ملے۔

ترجمان نے مزید کہا کہ 50بستروں کاآئسولیشن وارڈاور10بستروں کاآئی سی یو کام کررہا ہے، آئسولیشن وارڈ اور آئی سی یو زیادہ ترفل رہتے ہیں جبکہ ایس آئی یو ٹی میں8 ہزار 200افراد کی اسکریننگ کی گئی۔

یاد رہے کرونا سے متاثرہ ڈاکٹر کو وینٹی لیٹر نہ مل سکا تھا، جس کی وجہ سے بے بسی کی حالت میں انھوں نے جان دے دی تھی ، ڈاکٹر کے اہل خانہ کا کہنا تھا کہ طبیعت بگڑنے پر انھیں پہلے ایس آئی یو ٹی اور پھر انڈس اسپتال لے جایا گیا، مگر کہیں آئی سی یو اور وینٹی لیٹر خالی نہیں تھا، سرکاری اسپتال کے کئی وینٹی لیٹرز خراب پڑے ہیں، کوئی ایک ٹھیک ہوتا تو ڈاکٹر فرقان کی جان بچائی جا سکتی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں