The news is by your side.

Advertisement

اوہائیو میں سزائے موت کے قیدی کی سزا نس نہ ملنے پر ٹل گئی

اوہائیو : امریکی ریاست اوہائیومیں سزائے موت کے منتظرقیدی کی سزا پرعملدرآمد اس لئے نہ ہوسکا کہ زہریلا انجکشن لگانے کے لئے قیدی کی نس نہیں مل سکی۔

تفصیلات کے مطابق امریکی ریاست اوہائیو میں سزائے موت کے قیدی کی سزاٹل گئی اور وجہ انہترسالہ قیدی کی نس نہ ملنا بنی۔

قتل کے جرم میں موت کی سزا پانے والے ایلوا کیمبل کینسر،پھپڑوں اوردیگربیماریوں میں مبتلا ہیں، زہریلا انجکشن لگانے کے لئے ان کی نس نہ مل سکی تو سزاملتوی کردی گئی۔

ایلوا نے زہریلے انجکشن کے بجائے فائرنگ اسکواڈ کے ذریعے سزائے موت دینے کی درخواست دی تھی، جسے مسترد کردیا گیا۔


مزید پڑھیں : بیٹے کے قتل کے جرم میں سزائے موت پانے والی ماں بری


یاد رہے کہ اوہائیو میں اس سے قبل پانچ مختلف کیسزمیں سزائے موت پرعملدرآمد میں تاخیر ہوئی، جس پر ریاستی حکومت تنقید کی زد میں ہے۔

خیال رہے کہ امریکا کی مختلف ریاستوں میں زہریلا انجکشن لگا کر سزائے موت دی جاتی ہے، جس میں مجرم کے ہاتھ اور پیر ایک شکنجے میں کس دیئے جاتے ہیں، جس کے بعد اسے زہریلا انجیکشن دیا جاتا ہے اور انجیکشن کی وجہ سے آہستہ آہستہ اس کے دل کی دھڑکن بند ہو جاتی ہے۔

بعض ریاستوں میں سزائے موت کیلئے فائرنگ اسکواڈ کا طریقہ بھی استعمال کیا جاتا ہے، جس میں عام طور پر قیدی کی آنکھوں پر سیاہ پٹی اور ہاتھ پیر رسی سے باندھ کرکھڑا کردیا جاتا ہے اوراس کے بعد کئی افراد پر مشتمل اسکواڈ قیدی پر فائرنگ کرتا ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئرکریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں