site
stats
انٹرٹینمںٹ

اوم پوری کی موت ہارٹ اٹیک سے نہیں سر پر چوٹ لگنے سے ہوئی، حتمی رپورٹ

ممبئی :بھارتی اداکار اوم پوری کی موت کا معمہ حل نہ ہوسکا، پوسٹ مارٹم رپورٹ کے بعد شکوک یقین میں بدلنے لگے، اوم پوری کو قتل کیا گیا موت غیرطبعی تھی۔

تفصیلات کے مطابق پانچ اکتوبر دو ہزار سولہ کو بھارتی سرجیکل اسٹرائیک کے جھوٹے دعوے پر پاکستان کی کھل کرحمایت کرنے پر اوم پوری کو قتل کیا گیا، سر پر لگا ڈیڑھ انچ گہرا زخم موت سے چند لمحے پہلے کا ہے۔

ابتدائی پوسٹمارٹم رپورٹ کے مطابق اوم پوری کی وفات طبعی نہیں بلکہ قتل ہے، پوسٹمارٹم رپورٹ کے مطابق اوم پوری کے سر میں چوٹ آئی تھی۔

بھارتی پولیس نے اوم پوری کی حادثاتی موت کا مقدمہ کادرج کرکے ڈرائیور اور اہلخانہ سے تحقیقات کا آغاز کردیا گیا جبکہ دوست خالد قدوائی اور ڈرائیور کا بیان ریکارڈ کرلیا گیا۔

پروڈیوسر خالد قدوائی کا کہنا ہے کہ وفات کی شام میں ان کے ساتھ تھا، وہ اپنے بیٹے احسان کے بارے میں بہت پریشان تھے، اوم پوری سابقہ اہلیہ سے ملنے ان کے گھر گئے تو اسٹیل کے گلاس میں شراب لے کر گئے تھے لیکن گھر میں سابقہ اہلیہ سے لڑائی کے بعد واپسی نکلتے ہوئے اداکار کے ہاتھ میں شیشے کا گلاس اور شراب بھی تبدیل تھی۔


مزید پڑھیں : اوم پوری طبعی موت نہیں مرے، قتل کیا گیا، پوسٹ مارٹم رپورٹ


پولیس کی جانب سے نندتا کو بھی تفتیش کے لیے تھانے بلایا گیا تھا جس پر انہوں نے آنے سے انکار کردیا ہے۔

اس سے قبل میڈیارپورٹس کے مطابق را ایجنٹس نے اوم پوری کو نشہ آور مشروب میں ہارٹ فیلئرکی ادویات ملا کر قتل کیا، ذرائع کے مطابق بھارتی ایجنسیز کے پاس ایسی ادویات ہوتی ہیں، جو دل کے دورے کا سبب بنیں، پراسرار قتل کا منصوبہ بھارتی قومی سلامتی کے مشیرا جیت دوول کی جانب سے بنائے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔

ذرائع کے مطابق بھارتی ایجنسیز کا اگلا ہدف عالمی شہرت یافتہ بالی ووڈ اداکار شاہ رخ اور پاکستانی اداکارہ ماہرہ خان ہیں۔

واضح رہے کہ 3 روز قبل اوم پوری گھر میں مردہ پائے گئے تھے، جن کی موت کا سبب ہارٹ اٹیک کو قرار دیا گیا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top