The news is by your side.

Advertisement

امریکا میں سلاد کے پتے کھانے سے ایک شخص ہلاک، سینکڑوں بیمار پڑ گئے

واشنگٹن: امریکا کے مختلف علاقوں میں ’رومین لیٹس‘ نامی سلاد کے پتے کھانے سے ایک شخص ہلاک اور سینکڑوں  بیمار پڑ گئے۔

تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز امریکا کے مختلف علاقوں میں سلاد کے پتوں میں مخصوص بیکٹیریا ہونے کے باعث کھانے والے سینکڑوں شہری سخت بیمار ہوگئے جن میں سے ایک شخص کی ہلاکت کی تصدیق کی جاچکی ہے، جبکہ بیمار افراد کو علاج معالجے کے لیے اسپتال منتقل کیا جاچکا ہے۔

امریکی حکام کی جانب سے لوگوں کو یہ ہدایت دی گئی ہے کہ اگر انہوں نے کہیں سے بھی ’رومین لیٹس‘ نامی سلاد کے پتے خریدے ہیں تو اسے فوراً پھینک دیں، یہ سلاد اس وقت تک استعمال نہ کریں جب تک انہیں یہ یقین نہ ہو جائے کہ اسے ریاست ایری زونا کے علاقے یوما میں نہیں اگایا گیا ہو۔

پپیتے کے بیج بے شمار فائدوں کا باعث

دوسری جانب ماہرین امریکی ریاست ایری زونا میں قائم دو درجن فارموں کا معائنہ کر رہے ہیں اور ان کی پیداوار کے نمونوں کا تجزیہ بھی کیا جارہا ہے جبکہ طبی ماہرین کا کہنا ہے کہ سلاد میں موجود ’ای کولی‘ نامی بیکٹیریا کا حملہ بہت شدید ہوتا ہے اور اس کے نتیجے میں زیادہ تر مریضوں کو اسپتال داخل ہونا پڑتا ہے۔

پپیتہ:ہزاروں خوبیوں سے لبریز،زود ہضم پھل

خیال رہے کہ اس سے قبل امریکا میں ’ای کولی‘ بیکٹیریا نے 2006 میں وبائی شکل اختیار کی تھی، 2006 میں اس بیکٹیریا نے 200 سے زیادہ لوگوں کو بیمار کر دیا تھا، جبکہ ماضی میں ہونے والے حملے کے بعد یہ اس بیکٹیریا کا دوسرا بڑا حملہ ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں