The news is by your side.

Advertisement

وزیرِاعظم کی تقریر پر لائحہ عمل تیار کرنے کے لیے متحدہ اپوزیشن کا اجلاس

اسلام آباد: وزیرِاعظم کی آج کی قومی اسمبلی میں ہونے والی تقریر کے حوالے سے متحدہ اپوزیشن کا اہم اجلاس ہوا،جس میں فیصلہ ہوا کہ قائدِ حزبِ اختلاف اسمبلی میں پالیسی بیان دیں گے۔

تفصیلات کے مطابق وزیرِ اعظم نواز شریف آج قومی اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کریں گے ،اپنی کابینہ سے مشاورت کے بعد انہوں نے فیصلہ کیاہے کہ اپوزیشن کے سات سوالات کے جوابات دینے کے بجائے ایک پالیسی بیان دیں گے،صورتِ حال میں آئی اس تبدیلی پر مشاورت کے لیے متحدہ اپوزیشن کا اجلاس قائدِ حزب ِ اختلاف کی زیرِ صدارت ہوا۔


وزیراعظم کا اپوزیشن کو جواب نہ دینے کا فیصلہ


اجلاس میں شیخ رشید، نوید قمر،شیری رحمن،جہانگیر ترین،شیریں مزاری،کامل علی آغا،طارق بشیر چیمہ،آفتاب احمد شیرپاؤ اور میان عتیق نے شرکت کی۔

اجلاس میں اے این پی کی جانب سے کسی نمائندے نے شرکت نہیں کی جب کہ سینیٹر شاہی سید کی جانب سے کی گئی وزیر اعظم کے متعلق پوچھے گئے سوال کے جواب پر انہوں نے عمران خان پر تنقید کی جس سے اس بات کو تقویت ملتی ہے کہ اے این پی آج حکومت کے ساتھ کھڑی ہوگی۔

یاد رہے اب تک قومی اسمبلی کے 285 اجلاس ہوں چکے ہیں جس میں سے صرف 37 اجلاس میں وزیرِ اعظم میاں محمد نوازشریف نے شرکت کی ہے۔

دوسری طرف سینیٹ میں وزیر اعظم کی مسلسل غیر حاضری پر اعتزاز احسن کی قیادت میں اپوزیشن نے آج پھر اجلاس کا بائیکاٹ کیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں