The news is by your side.

Advertisement

ہونٹوں پر لگے لپ اسٹک سے حیرت انگیز تصاویر کی تخلیق

ٹورانٹو: کینیڈا سے تعلق رکھنے والی خاتون آرٹسٹ ایلکسس فریزر نے مصوری کو ایک نئے معنی دیئے ہیں جس میں وہ اپنے لپ اسٹک لگے ہونٹوں سے کینوس کو بوسہ دے کر ہوش ربا پورٹریٹ تیار کرتی ہیں۔

اس مہارت کی وجہ سے ایلکسس فریزر کو’لپ اسٹک لیکس‘ بھی کہا جاتا ہے، انہوں نے آرٹ کے اس شعبے کو ’ کِس پرنٹ پوائنٹلزم ‘ کا نام دیا ہے۔

article-2012431-0CE97A2E00000578-724_634x377

اس کے لیے وہ ہونٹوں پر لپ اسٹک لگا کرکینوس پر ہونٹوں کے نشان یہاں تک چھاپتی ہیں جب تک اس سے تصویر مکمل نہیں ہوجاتی۔

591625-kisses-1472223158-128-640x480

لوگوں کے خیال میں یہ ایک آسان عمل ہے لیکن ہونٹو کو درست جگہ اور اسی شدت سے لگانا ایک آرٹ ہے، ایلیکسس نے فرینک سناترا اور صوفیہ لورین کے چھوٹے پورٹریٹس کو چند گھنٹوں میں تیار کرلیا جب کہ دیگر بڑے پورٹریٹس بنانے میں ہفتوں لگ جاتے ہیں۔

kiss

وہ ہر ماہ درجنوں لپ اسٹک ختم کردیتی ہیں، 2014 میں انہوں نے مارلن منرو کا پورٹریٹ بنانے میں 2 لپ اسٹک خرچ کی تھیں۔ ایلکسس کا کام دنیا بھر میں مشہور ہورہا ہے اور لگ اسے آرڈر پر بھی تصاویر بنواتے ہیں۔

article-2012431-0CE97A3200000578-810_634x353

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں