The news is by your side.

Advertisement

حکومتِ پاکستان کا بڑا فیصلہ: روسی کورونا ویکسین کی ہنگامی طور پر استعمال کی اجازت

اسلام آباد: حکومت پاکستان نے روسی کورونا ویکسین کے ہنگامی استعمال کی اجازت دے دی ، جس کے بعد سپٹنک فائیو ویکسین پاکستان میں استعمال ہوسکے گی۔

تفصیلات کے مطابق حکومت پاکستان نے روسی کورونا ویکسین کے ہنگامی استعمال کی اجازت دیدی، سپٹنک فائیو کے ہنگامی استعمال کی اجازت ڈریپ رجسٹریشن بورڈ نے دی، سپٹنک فائیو کوڈرگ ایکٹ 1976سیکشن 7 کے تحت اجازت دی گئی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ڈریپ منظوری پرسپٹنک فائیو ویکسین پاکستان میں استعمال ہوسکے گی، پاکستانی کمپنی نے سپٹنک فائیو کے ہنگامی استعمال کی اجازت مانگی تھی۔

ڈریپ ذرائع کے مطابق کراچی کی فارما کمپنی سپٹنک فائیو کورونا ویکسین درآمدکرے گی، فارماکمپنی کوسپٹنک فائیو کے ہنگامی استعمال کی اجازت 3ماہ کیلئے دی گئی، سپٹنک فائیو کے ہنگامی استعمال کااجازت نامہ یکم اپریل تک موثر رہے گا۔

ذرائع نے کہا کہ سپٹنک فائیو ویکسین 18 سال سے زائد عمر کے افراد کو دی جاسکے گی، اس ویکسین کو منفی 18درجہ حرارت پرذخیرہ کرنا ہوگا، فارما کمپنی ویکسینیٹڈ افراد کا ڈیٹا ڈریپ کوجمع کرانےکی پابندہوگی اور ویکسین کی تقسیم کاریکارڈمرتب کرےگی۔

ڈریپ ذرائع کا کہنا تھا کہ سپٹنک فائیوکوروناویکسین کی کامیابی کاتناسب91.6فیصدہے اور روسی حکومت کےتعاون سے مقامی سطح پرتیار کردہ ہے، سپٹنک فائیونیشنل ریسرچ سینٹرایپیڈیمالوجی مائیکروبیالوجی نے تیار کی ہے۔

ذرائع کے مطابق روس پاکستان کو حکومتی سطح پر ویکسین فروخت کی 2 بار پیشکش کر چکا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں