The news is by your side.

Advertisement

شہباز حکومت نے آئی ایم ایف کا مطالبہ مان لیا ، اعلامیہ جاری

واشنگٹن : پاکستان نے آئی ایم ایف سے سبسڈیز ختم کرنے پر اتفاق کرلیا اور قرض پروگرام جون 2023تک جاری رکھنے پر زور دیا۔

تفصیلات کے مطابق شہباز حکومت نے آئی ایم ایف کا مطالبہ مان لیا اور سبسڈیز ختم کرنے اور ریونیو بڑھانے کی یقین دہانی کرادی۔

آئی ایم ایف کے مشن چیف نیتھن پورٹر نے پاکستان سے مذاکرات سے متعلق اعلامیہ جاری کردیا ، جس میں کہا کہ پاکستان کے قرض پروگرام کی توسیع پربات چیت ہوئی، پاکستان نےغیر ضروری سبسڈیز ختم کرنے پر اتفاق کیا ہے۔

آئی ایم ایف مشن چیف کا کہنا تھا کہ پاکستان کےساتھ 7ویں جائزہ اجلاس میں مزیدبات چیت کریں گے، پاکستان نے قرض پروگرام جون 2023 تک جاری رکھنےپرزوردیا اور یقین دہانی کروائی کہ پروگرام کے تحت اہداف حاصل کرے گا۔

اعلامیے میں کہا گیا کہ پاکستان کے لیے قرض پروگرام جاری رہے گا اور انکم سپورٹ پروگرام،صحت کارڈکی سہولت برقرار رہے گی۔

نیتھن پورٹر نے کہا کہ ڈپٹی ڈائریکٹرآئی ایم ایف اور مفتاح اسماعیل میں مثبت بات چیت ہوئی، آئی ایم ایف مشن مئی میں پاکستان کادورہ کرےگا ، دورے کے دوران پاکستان سےمعاشی اصلاحات اور ایکسٹنڈفنڈز پر بات چیت ہوگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں