The news is by your side.

ملک کی مختلف جیلوں میں 8 مجرمان کو سزائے موت دے دی گئی

لاہور: پنجاب کے مختلف شہروں کی جیلوں میں آج آٹھ افراد کی سزائے موت پرعملدرآمد کردیا گیا ، دسمبرمیں سزائے موت سے پابندی ختم ہونے کے بعد اب تک 230 افراد کو پھانسی دی جاچکی ہے۔

سزائے موت کی سزا پانے والوں میں دو بھائی بھی شامل ہیں، سزائے موت پر عمل درآمد اٹک، گجرات، ملتان اور بہاولپورکی جیلوں میں کیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق محمد اعظم اورمحمد اسلم نامی بھائیوں کو گجرات میں سزائے موت دی گئی جبکہ غلام قادر اورغلام سرورنامی بھائیوں کو بہاولپور کی جیل میں سزا دی گئی۔

دوہرے خون کے الزام میں سزا یافتہ محمد اشرف کو اٹک جیل میں تختۂ دارکے حوالے کیا گیا اوردوافراد کو ملتان اورایک کو بہاولپور کی جیل میں سزائے موت دی گئی۔

پاکستان میں سزائے موت پرچھ سال سزائے موت پر پابندی عائد رہی جسے آرمی پبلک اسکول سانحے کے بعد ختم کیا گیا اوراب تک مختلف جیلوں میں کل 230 مجرمان کو تختہ دارکے حوالے کیا جاچکا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں