The news is by your side.

Advertisement

کلبھوشن یادیو کیلئے وکیل مقرر کرنے کا آخری موقع ، پاکستان نے بھارت کو عدالتی فیصلے سے آگاہ کردیا

اسلام آباد : پاکستان نے بھارت کو دہشت گرد کلبھوشن یادیو کیلئے وکیل مقررکرنے سے متعلق اسلام آبادہائی کورٹ کے فیصلے سے آگاہ کردیا، عدالت نے کلبھوشن یادیوکووکیل مقررکرنے کا آخری موقع دے رکھا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان نے بھارت کو دہشت گرد کلبھوشن یادیو کیس میں اسلام آباد ہائی کورٹ کے فیصلے سے آگاہ کردیا،بھارتی ہائی کمیشن کوعدالتی فیصلے کی کاپی بھی ارسال کردی گئی ہے۔

عدالت نے بھارت کو کلبھوشن یادیو کیلئے وکیل مقرر کرنے کا آخری موقع دے رکھا ہے، دوران سماعت دوران سماعت چیف جسٹس اطہر من اللہ نے کہا تھا کہ یہ آئینی عدالت ہے فیئر ٹرائل مدنظر رکھتے ہوئے بھارت کو موقع دیتے ہیں۔

مزید پڑھیں : بھارت کو کلبھوشن کیلیے وکیل مقرر کرنے کا ایک اور موقع

اٹارنی جنرل خالد جاوید نے کہا تھا کہ بھارت عدالتی کارروائی میں شامل نہیں ہوتا تو یہ الگ صورتحال ہوگی، بھارت نے کچھ دستاویزات کیلئے جونیئر وکیل مقرر کیا، اگر بھارت دستاویزات لینا چاہتا ہے تو قانون کو فالو کرے۔

اٹارنی جنرل کا کہنا تھا کہ بھارت کے پاس اب بھی آپشن ہے وہ کونسلر رسائی لینا چاہتا ہے تو لے سکتا ہے، پاکستان عالمی عدالت انصاف کے فیصلے پر عمل کرنے کے لیے تیار ہے لیکن بھارت نظرثانی کے معاملے پر رکاوٹ بن رہا ہے۔

یاد رہے وزارت قانون نےا سلام آبادہائی کورٹ میں کلبھوشن کا قانونی نمائندہ مقرر کرنے کی درخواست دائر کی تھی، درخواست میں استدعا کی گئی تھی کہ عدالت اس حوالے سے حکم صادر کرے تاکہ عالمی عدالت انصاف کے فیصلے کے مطابق پاکستان کی ذمہ داری پوری ہو سکے۔

حکومت کی عدالت میں دائر درخواست میں موقف اپنایا گیا تھا کہ بھارتی جاسوس نے سزا کے خلاف درخواست دائر کرنے سے انکار کیا، وہ بھارت کی معاونت کے بغیر پاکستان میں وکیل مقرر نہیں کرسکتا، بھارت بھی آرڈینینس کے تحت سہولت حاصل کرنے سے گریزاں ہے۔

خیال رہے فوجی عدالت نے کلبھوشن کوجاسوسی کے الزام میں سزائےموت سنارکھی ہے ، 17جولائی2019کوعالمی عدالت انصاف نے پاکستان کو فیصلے پر نظرثانی اور کلبھوشن یادیوکوقونصلررسائی کا حکم دیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں