وزیراعظم کی کاوشوں سے سعودی عرب پاکستان تعلقات نئے دور میں داخل ہو رہے ہیں: وزیر خارجہ
The news is by your side.

Advertisement

وزیراعظم کی کاوشوں سے سعودی عرب پاکستان تعلقات نئے دور میں داخل ہو رہے ہیں: وزیر خارجہ

 گوادر کو دنیا کے لئے اقتصادی راہداری کا حب بنانا چاہتے ہیں، پاکستان یمن جنگ کا حصہ نہیں بنے گا

 اسلام آباد: وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ وزیر اعظم کی کاوشوں سے سعودی عرب کے ساتھ تعلقات نئے دور میں داخل ہو رہے ہیں.

ان خیالات کا اظہار  انھوں نے خصوصی پریس کانفرنس میں کیا۔ اس موقع پر وزیر اطلاعات فواد چوہدری، مشیر تجارت رزاق داؤد اور چیئرمین ورڈ آف انویسمنٹ ہارون شریف بھی موجود تھے.

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ سعودی عرب پاکستان کا بااعتماد اور قریبی دوست ہے، حکومت میں آئے، تو سعودی عرب سے تعلقات سردمہری کا شکار تھے، وزیراعظم کی ذاتی کاوشوں سے دوطرفہ تعلقات میں خوشگوار تبدیلی آئی۔

وزیرخارجہ نے کہا کہ سعوی عرب نے مشکل وقت میں ہمیشہ پاکستان کی کھل کر امداد کی ، سعودی عرب نے  پاکستان کو 3 ارب ڈالر کی خطیر رقم دی، وزیر خارجہ نے کہا کہ سعودی ولی عہد ہفتہ سولہ فروری کو پاکستان آئیں گے، پندرہ سے بیس ارب کے معاہدے متوقع ہیں، سعودی عرب 3سال کے لئےمؤخر ادائیگیوں کے لئے تیل فراہم کررہا ہے، سعودی عرب کے ساتھ ایم اویوز پرعمل درآمد کے لئے نیا مکینزم بنا رہے ہیں.

معاشی واقتصادی بحالی خارجہ پالیسی کی اولین ترجیح ہے : شاہ محمود قریشی

ان کا کہنا تھا کہ کل اہم دورے پر جرمنی جارہا ہوں، وہاں‌ اہم ملاقاتیں متوقع ہیں، وزیراعظم عمران خان کو دورہ جرمنی سے متعلق اعتماد میں لیا ہے، کل میری افغان صدر اشرف غنی سے جرمنی میں ملاقات ہوگی، ہماری کوشش ہے علاقائی اسٹیک ہولڈرز کو ساتھ لے کر چلیں.

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ زلمے خلیل زاد نے حالیہ دورے کے بعد پاکستان سےمتعلق مثبت پیغام دیا، روس، جرمنی، ازبکستان، کینیڈا کے وزیرخارجہ سے ملاقاتیں متوقع ہیں، جن کے مثبت نتائج آئیں گے.

انھوں نے کہا کہ یہاں اچھی چیز  ہو، تو اس پربھی شک کیاجاتا ہے کہیں سازش تو نہیں ، واضح کرتا ہوں کہ  کوئی سازش نہیں ہورہی، پاکستان یمن جنگ کا حصہ نہیں بنے گا۔

ایک سوال کے جواب میں انھوں نے کہا کہ لبنانی وزیراعظم کاشکوہ تھا کہ نوازشریف نے وعدے پورے نہیں کئے، لبنانی وزیراعظم نے کہا کہ دوبارہ کوئی ڈیل کی غلطی نہیں کریں گے۔

سی پیک کے تحت اسپیشل اکنامک زونز تشکیل دیےجارہے ہیں، تین زونز پر چین سے بات چیت مکمل ہوچکی ہے: شاہ محمود قریشی

ان کا کہنا تھا کہ جنرل(ر) راحیل شریف کل پاکستان آئے اورمختلف نشستیں کیں، سی پیک کے تحت اسپیشل اکنامک زونز تشکیل دیےجارہےہیں، تین اسپیشل اکنامک زونز پر چین سے بات چیت مکمل ہوچکی ہے ، دنیا کےتمام ممالک تین اسپیشل اکنامک زونز کا حصہ بن سکتے ہیں، گوادر کو دنیا کےلئے اقتصادی راہداری کا حب بنانا چاہتے ہیں، معاشی واقتصادی بحالی خارجہ پالیسی کی اولین ترجیح ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ کشمیر کانفرنس پراپوزیشن جماعتوں نےحکومت کاساتھ دیا، بھارت نےبرطانوی پارلیمنٹیرنز پر کشمیر کانفرنس رکوانے کے لئے دباؤ ڈالا، کشمیریوں نے برطانیہ میں5 فروری کو پہلی باراتنی بڑی تعدادمیں احتجاج ریکارڈکرایا۔

وزیر اعظم بننے کے بعد عمران خان کو پہلا فون کس نے کیا؟

اس موقع پر وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے کہا کہ عمران خان کو وزیر اعظم بننے کے بعد پہلا فون سعودی فرمان روا کا آیا تھا، عمران خان کو مبارک باد کا دوسرا ٹیلیفون سعودی ولی عہد کا موصول ہوا.

وزیراطلاعات فواد چوہدری نئی حکومت کے بعد سعودی عرب سے شروع روابط کے بعد پیچھے نہیں دیکھا.

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں