The news is by your side.

Advertisement

سیز فائر کیخلاف ورزیوں پر بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر کی طلبی ،پاکستان کا شدید احتجاج

اسلام آباد : پاکستان نے لائن آف کنٹرول پر جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزی پر بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنرکو طلب کرکے سخت احتجاج کیااور کہا بھارت جنگ بندی مفاہمت کا احترام کرے۔

تفصیلات کے مطابق فتر خارجہ کے ڈائریکٹر جنرل برائے جنوبی ایشیا ڈاکٹر محمد فیصل نے بھارت کے ڈپٹی ہائی کمشنر گورو اہلووالیا کو دفتر خارجہ طلب کی اور بھارت سے لائن آف کنٹرول پر جنگ بندی کی بلااشتعال خلاف ورزی پر شدید احتجاج کیا اور بھارت کو خبردار کیا ہے کہ اس کا عمل کسی تزویراتی غلط فہمی کا باعث بن سکتا ہے۔

ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق جان بوجھ کر شہری آبادی کو نشانہ بنانا انسانی عظمت، بین الاقوامی انسانی حقوق اور ہیومنٹیرین قوانین کی خلاف ورزی ہے، بھارت کی طرف سے جنگ بندی کی خلاف ورزی علاقائی امن و سلامتی کے لئے خطرہ ہے، بھارتی خلاف ورزیوں سے تزویراتی غلط فہمی پیدا ہوسکتی ہے۔

ڈاکٹر محمد فیصل نے بھارت پر زور دیا کہ 2003کی جنگ بندی مفاہمت کا احترام کرے، بھارت اپنی افواج کو جنگ بندی پر مکمل عملدرآمد کی ہدایت کرے، لائن آف کنٹرول اور ورکنگ باونڈری پر بھارت امن برقرار رکھے، بھارت اقوام متحدہ کے امن مشن کو سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق کردار ادا کرنے دے۔

یاد رہے بھارت کی طرف سے 28 جولائی کو لائن آف کنٹرول کے کیلر اور نیزاپیرسیکٹر پر جنگ بندی کی خلاف ورزی کی گئی، بھارتی افواج کی بلااشتعال فائرنگ سے پاکستانی شہری منیرحسین اور ایک خاتون رحمت جان شہید اور چار شہری زخمی ہوئے تھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں