The news is by your side.

Advertisement

پاکستان تو رہے گا، مراد علی شاہ نہیں رہیں گے: مراد سعید

اسلام آباد: وفاقی وزیر مراد سعید نے وزیر اعلیٰ سندھ کی صوبائی اسمبلی میں تقریر پر سخت رد عمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان رہے گا، مراد علی شاہ نہیں رہے گا، انھیں شرم آنی چاہیے۔

تفصیلات کے مطابق آج وزیر اعلیٰ سندھ نے اسمبلی میں تقریر کرتے ہوئے کہا تھا کہ سندھ کو کسی بھی قسم کا نقصان پہنچانا وفاق کو نقصان پہنچانے کے مترادف ہے، سندھ کو نقصان پہنچاؤ گے تو وفاق بھی نہیں بچے گا۔

اس پر مراد سعید نے سخت جواب دیتے ہوئے کہا کہ وزیر اعلیٰ سندھ کو اس طرح بات کرتے ہوئے شرم آنی چاہیے، کراچی کچرا کنڈی بن چکا ہے، ان کے پاس مریضوں کے لیے ایمبولینس تک نہیں، یہ چوروں اور ڈاکوؤں کو اسمبلی میں لے کر آتے ہیں۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ عمران خان انھیں کوئی این آر او نہیں دینے والا، احتساب سب کا ہوگا۔

یہ بھی پڑھیں:  سندھ اسمبلی کا اجلاس: وزیر اعلیٰ مرادعلی شاہ کی وفاقی حکومت پرکڑی تنقید

انھوں نے مزید کہا کہ صدر مملکت کے حکم پر سندھ میں مالیاتی ایمرجنسی لگائی جا سکتی ہے، صوبائی اسمبلی اور حکومت کے اختیارات گورنر کو دیے جا سکتے ہیں۔

دریں اثنا، سندھ اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر فردوس شمیم نقوی نے اپنے ردِ عمل میں کہا آرٹیکل ایک سو انچاس لاگو ہوگا تو مراد علی شاہ کو عمران خان کے حکم پر ہی کام کرنا ہوگا، ہم کراچی کو لاوارث نہیں چھوڑ سکتے، بات نہ بنی تو آرٹیکل 234 اور 235 کا سہارا لیں گے۔

واضح رہے کہ وزیر اعلیٰ سندھ نے اسمبلی فلور پر کہا تھا کہ وفاقی حکومت روز ایک کراچی کمیٹی بنا دیتی ہے، کراچی کمیٹی بنانا آئین کی خلاف ورزی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں