The news is by your side.

سیلاب سے تباہ کاریاں : پاکستان کا عالمی مالیاتی اداروں سے امداد لینے کا فیصلہ

اسلام آباد: پاکستان نے سیلاب سےتباہ کاریوں کے باعث عالمی مالیاتی اداروں سے امداد لینے کا فیصلہ کرلیا ، ابتدائی تخمینے کے مطابق ملکی معیشت کو دس ارب ڈالر سے زیادہ کا نقصان پہنچا ہے۔

تفصیلات کے مطابق حکومت نے آئی ایم ایف ، عالمی بینک ، ایشیائی ترقیاتی بینک اور دیگر مالیاتی اداروں سے امداد لینے کا فیصلہ کرلیا۔

سیلاب سے تباہ کاریوں سے باعث مالیاتی اداروں سے امداد کی درخواست کی جائے گی اور مالیاتی اداروں کو وزارت منصوبہ بندی، وزارت خزانہ اور این ڈی ایم اے کی رپورٹ بھیجی جائے گی۔

ذرائع وزارت خزانہ کا کہنا ہے کہ سیلاب سے نقصانات پر ابتدائی تخمینے پر مبنی رپورٹ تیار کی گئی ہے، ابتدائی تخمینے کے مطابق ملکی معیشت کو 10 ارب ڈالر سے زیادہ نقصان پہنچا ہے۔

ذرائع وزارت منصوبہ بندی نے بتایا کہ سیلاب سے زراعت اور انفرااسٹرکچر سمیت دیگر نقصان شامل ہیں ، 3 کروڑ 30 لاکھ سے زائد آبادی اور 10 لاکھ سے زائد مکانات کا نقصان ہوا۔

ذرائع کے مطابق آئی ایم ایف سے ریپڈ فنانس انسٹرومنٹ کے تحت مالی امدادکی اپیل کی جائے گی ، مالیاتی اداروں سے مختص کوٹے کے مطابق مالی امداد ملنے کا امکان ہے۔

وزیرمملکت خزانہ عائشہ غوث کا کہنا ہے کہ مالیاتی اداروں سے مالیاتی امداد کی درخواست کی جائےگی اور سیلاب سےنقصان کا اندازہ ایک دو روز میں مکمل کرلیا جائے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں