The news is by your side.

Advertisement

ہوا میں اڑنے والا ٹرک یا ٹرک آرٹ کا نمونہ

کراچی: پاکستانی ٹرک آرٹ کا سفر سڑکوں سے فضاؤں تک پہنچ گیا ہے، کراچی میں ایک فلائنگ اکیڈمی نے سیسنا جہاز پر ٹرک آرٹ استعمال کر کے اسے نیا روپ دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق پاکستانی ٹرک آرٹ کے روایتی رنگ اب فضاؤں میں بھی اڑیں گے، اسکائی ونگز نامی فلائٹ ٹریننگ آرگنائزیشن نے اپنے طیاروں کو پاکستانی ٹرک آرٹ کے روایتی رنگوں سے سجانا شروع کر دیا ہے۔

اسکائی ونگز آرگنائزیشن کے چیف آپریٹنگ آفیسر عمران اسلم کے مطابق طیاروں کو روایتی رنگوں سے سجانے کا مقصد سیاحت اور پاکستان کے بہتر امیج کو دنیا بھر میں متعارف کرانا ہے۔

ٹرک آرٹ کے ماہر حیدر علی کا کہنا ہے کہ یہ فن ہمارے ملک کی پہچان ہے، اب یہ دنیا بھر میں ہماری پہچان بنے گا۔ چالیس سالہ حیدر علی نے ٹرک آرٹ کا کام اپنے والد سے سیکھا تھا اور اب ان کا شمار اس فیلڈ کے مشہور ترین کاریگروں میں ہوتا ہے۔

واضح رہے کہ پاکستانی ٹرک آرٹ دنیا بھر میں مقبول ہو چکا ہے، اور اب یہ آرٹ فضاؤں میں بھی اپنی پہچان کے لیے تیار ہے، اس سلسلے میں کراچی ایئر پورٹ پر موجود دو سیسنا طیاروں کو ٹرک آرٹ سے مزین کیا گیا ہے۔

کئی مغربی ممالک کی آرٹ گیلریوں میں پاکستانی ٹرک آرٹ کو پیش کیا جا چکا ہے اور کئی بین الاقوامی اسٹورز سے ایسی چھوٹی چھوٹی اشیا ملتی ہیں، جن پر آپ کو پاکستانی ٹرک آرٹ کے رنگ نظر آتے ہیں۔

چند برس قبل جب اس ٹرک آرٹ کو دنیا کے سامنے لایا گیا تو اس کا مقصد دہشت گردی کی لپیٹ میں آئے ہوئے پاکستان کا مثبت تشخص اجاگر کرنا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں