The news is by your side.

Advertisement

پاکپتن : خاتون کے قتل کا ڈراپ سین، دو ملزمان گرفتار

پاکپتن : گزشتہ ماہ قتل ہونے والی خاتون کے قتل کے واقعہ کا ڈراپ سین ہوگیا، پولیس نے دو ملزمان گرفتار کرلیے جبکہ ابتدائی تحقیقات میں خاتون سے زیادتی ثابت نہ ہوسکی۔

رواں سال اکتوبر کی 31تاریخ کو مبینہ طور پر ذیادتی کے بعد قتل کی جانے والی خاتون کے قتل میں ملوث دو ملزمان کو پولیس نے گرفتار کرلیا، ایک ملزمہ پہلے ہی گرفتار ہو چکی ہے۔

پولیس کی کارروائی کے بعد گاؤں بھیلہ میں اجتماعی زیادتی کے بعد خاتون کے قتل کے واقعہ میں نیا موڑ آ گیا، اس حوالے سے ڈی پی او نجیب الرحمن کے مطابق ابتدائی تحقیقات میں خاتون سے زیادتی کا الزام ثابت ثابت نہیں ہوسکا۔

ڈی پی او پاکپتن پولیس کے مطابق واقعہ کی مزید تفتیش کے لیے نمونہ جات فرانزک لیب کو بھجوا دیئے گئے، اکتوبر کو مرکزی ملزمہ کے گھر سے خاتون کی صندوق بند لاش ملی تھی۔ ملزمان جتنے بھی چالاک کیوں نہ ہوں قانون کی گرفت سے نہیں بچ سکتے۔

واضح رہے کہ پاکپتن میں مبینہ طور پر اجتماعی زیادتی کے بعد قتل کی جانے والی خاتون کی لاش پڑوسن کے گھر میں صندوق سے برآمد ہوئی تھی۔ ملزمہ مقتولہ کو بہانے سے اپنے گھر لے کرگئی۔

پولیس کے مطابق گرفتار ملزمہ کا کہنا ہے کہ ملزمان نے پکڑے جانے کے خوف سے خاتون کو قتل کیا۔مقتولہ کے پوسٹ مارٹم کے بعد مقتولہ کے بھائی کی مدعیت میں چار افراد کیخلاف مقدمہ درج کیا گیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں