تازہ ترین

نئے قرض کیلئے مذاکرات، آئی ایم ایف نے پاکستان کے لیے خطرے کی گھنٹی بجادی

واشنگٹن : آئی ایم ایف کی منیجنگ ڈائریکٹر کرسٹیلینا...

سعودی وزیر خارجہ کی سربراہی میں اعلیٰ سطح کا وفد آج پاکستان پہنچے گا

اسلام آباد : سعودی وزیرخارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان...

جہاز پر موجود پاکستانیوں کی موجودگی، حکومت کا ایران سے رابطہ

ایرانی افواج کی جانب سے قبضے میں لیے گئے...

’کچھ سیاستدان دوبارہ سازش تیار کر رہے ہیں‘

چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ سازشی...

یورپی یونین نے اسرائیلی فورسز کے فلسطین میں حملوں کو پاگل پن قرار دے دیا

لندن: یورپی یونین نے اسرائیلی فورسز کے فلسطین میں حملوں کو پاگل پن قرار دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق اسرائیلی فورسز کی فلسطین میں جارحیت جاری ہے، قابض فورسز نے گزشتہ رات نابلس شہر میں فلسطینیوں کی گاڑیاں جلا دیں، ایک ایمبولنس کو بھی نذر آتش کیا گیا۔

اسرائیل کی فلسطین میں جارحیت پر یورپی یونین کا سخت ردعمل سامنے آیا ہے، یورپی یونین کے سربراہ جوزپ بوریل نے مقبوضہ بیت المقدس میں حملوں کی ’شدید مذمت‘ کی ہے۔

یورپی یونین نے ان حملوں کو پاگل پن اور نفرت پر مبنی تشدد کے واقعات قرار دے دیا، ان کا کہنا تھا کہ ’تشدد کا یہ سلسلہ فوری طور پر روکا جائے۔‘

ہفتے کے روز اسرائیل فلسطین کشیدگی کو فوری طور پر کم کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے یوروپی یونین نے زور دیا کہ تل ابیب کو صرف ’آخری حربے‘ کے طور پر مہلک طاقت کا استعمال کرنا چاہیے۔

خارجہ پالیسی کے سربراہ جوزپ بوریل نے ایک بیان میں کہا کہ یورپی یونین اسرائیل اور فلسطین میں بڑھتی ہوئی کشیدگی پر بہت فکر مند ہے۔

یاد رہے کہ رواں سال کے آغاز سے مغربی کنارے میں شہید ہونے والے فلسطینیوں کی تعداد 30 ہو گئی ہے، جمعرات کے روز مقبوضہ مغربی کنارے کے قصبے جینین میں اسرائیلی فوج کی ایک کارروائی میں 9 فلسطینیوں کو شہید اور درجنوں کو زخمی کرنے کے بعد مقبوضہ بیت المقدس میں اسرائیلی آبادکاروں پر حملے ہوئے، جن میں 7 اسرائیلی ہلاک ہوئے۔

مغربی کنارے میں اسرائیلی فورسز کے ہاتھوں گزشتہ برس 150 سے زائد فلسطینی شہید ہوئے، جن میں 30 بچے بھی شامل تھے۔

Comments

- Advertisement -