The news is by your side.

Advertisement

بچے کو زیادہ پانی پلا کر مار دینے والے والدین

کولارڈو : امریکہ میں والدین نے اپنے 11سالہ بچے کو زبردستی پانی پلا پلا کر مار ڈالا، پولیس نے میاں بیوی کیخلاف قتل اور بچوں پر مظالم کا مقدمہ درج کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق امریکہ کے شہر کولارڈو کے علاقے بلیک فاریسٹ میں ایک گیارہ سالہ بچے لاش ملی ہے، ایل پاسو کاؤنٹی پولیس کے مطابق مردہ بچے نے ایک ڈائپر پہنا ہوا تھا۔

اس حوالے سے استغاثہ کا کہنا ہے کہ میاں بیوی نے بچے کو بہت سارا پانی پلایا تھا کیونکہ بچے کے پیشاب میں کالا پن بہت زیادہ تھا۔ بچے کی والدہ تارا سبین جو اس کی سوتیلی ماں ہے نے اپنے حلفیہ بیان میں بتایا کہ 11سالہ زچری سبین کے ساتھ ایک دیرینہ مسئلہ ہے کہ وہ رات کو سوتے میں پیشاب کرکے بستر گیلا کردیتا ہے۔

ذرائع کے مطابق منگل کے روز 41 سالہ ریان سبین اور 42 سالہ تارا سبین نے خود پولیس کو اطلاع دی تھی، ریان سبین نے گیارہ مارچ کو صبح 9بجے 911 پر فون کیا جب اس نے زچری کو اپنے بستر پر منہ سے جھاگ نکلتے ہوئے دیکھا اور اس کے علاوہ بچے کے بستر پر خون کے بھی نشانات دیکھے تھے۔

پوسٹ مارٹم رپورٹ کے مطابق بچے کو بغیر کھائے پیے چار گھنٹے کے دوران پانی کی کئی بوتلیں پلائی گئیں، جس کے بعد وہ غیر معمولی غنودگی کا شکار ہوگیا۔ رپورٹ کے مطابق پولیس کو اس کے بائیں ابرو اور پیشانی پر خون کے نشان ملے ہیں۔ 11سالہ بچے کے سر، بازوؤں،پنڈلیوں اور کولہوں پر بھی زخموں کے نشانات ہیں۔

پولیس کا کہنا ہے کہ بچے کو زبردستی پانی پلایا گیا جس سے اس کی موت واقع ہوگئی، ریان اور تارا سبین دونوں ملزمان پر فرسٹ ڈگری قتل، بچوں پر مظالم کے نتیجے میں موت اور بچوں سے بد سلوکی کے چھ الزامات کے تحت مقدمہ قائم کیا گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں