The news is by your side.

والدین نے مل کر جوان بیٹی کو کیوں قتل کیا؟ افسوسناک وجہ سامنے آگئی

پسند کی شادی کرنے کا ’جرم‘لڑکی کی جان لے گیا، قاتل کوئی اور نہیں اسی کے والدین نکلے، ماں باپ نے مل کر بیٹی کو ٹھکانے لگایا۔

بھارتی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق ریاست اُتر پردیش میں سنگدل باپ نے دوسری ذات کے لڑکے سے پسند کی شادی کرنے پر اپنی 22 سالہ بیٹی آیوشی کو گولی مار کر قتل کردیا۔

واردات میں صرف باپ ہی نہیں بلکہ مقتولہ کی والدہ نے بھی اہم کردار ادا کیا، جس نے لاش کو ٹھکانے لگانے کیلئے اسے سوٹ کیس میں رکھنے میں اپنے شوہر کی مدد کی۔

بھارتی پولیس کا کہنا ہے کہ22 سالہ آیوشی چوہدری کی لاش گزشتہ جمعہ کو یمنا ایکسپریس وے پر ایک لال رنگ کے بڑے سوٹ کیس سے ملی تھی۔

مقتولہ نے اپنے والدین کی مرضی کے خلاف دوسری ذات والے لڑکے سے شادی کی تھی جس پر اس کے والد نے طیش میں آکر اس کی جان لے لی۔

واردات کے بعد ملزمان نے بیٹی کی لاش کو دور دراز علاقے میں پھینک دیا، بعد ازاں پولیس کو اطلاع ملی تو اس میں سے لاش برآمد ہوگئی، لڑکی کا چہرہ خون سے آلود تھا اور اس کے جسم پر بھی تشدد کے کئی نشانات بھی موجود تھے۔

پولیس نے جائے وقوعہ پر موجود سی سی ٹی وی کیمروں کی مدد سے تفتیش جاری رکھی اور مقتولہ کے ورثاء سے رابطے کیلئے بھی کوششیں کیں تو والدین نے تھانے آکر لاش کو شناخت کرلیا۔

تفتیش میں نیا موڑ اس وقت آیا جب ایک نامعلوم فون کال پر پولیس کو بتایا گیا کہ لڑکی کا قتل کیسے اور کیوں کیا گیا؟ جس کے بعد پولیس نے روایتی انداز میں تفتیش کی تو لڑکی کے والدین نے جرم قبول کرلیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں