The news is by your side.

یوکرین میں سابق افغان پائلٹس کو تعینات کرنے کا امریکی منصوبہ سامنے آگیا

ماسکو: امریکا کے محکمہ دفاع پینٹاگون نے یوکرین میں روسی فوج کا مقابلہ کرنے کے لیے سابق افغان پائلٹس کو تعینات کرنے کا منصوبہ بنا لیا ہے۔

روسی خبر رساں ایجنسی ’ٹاس‘ نے فوجی اور سفارتی ذرائع کا حوالہ دے کر بتایا ہے کہ پینٹاگون امریکی ریاست کیلیفورنیا میں سابق افغان پائلٹس کو تریبت دے کر پولینڈ کے راستے یوکرین میں بھیجنے کی تیاری کر رہا ہے۔

ذرائع نے بتایا: ’ہم جانتے ہیں کہ ایک سال قبل پینٹاگون نے سابق افغان پائلٹس کو فوج میں بھرتی کرنا شروع کیا جو افغانستان سے فرار ہوکر امریکا پہنچے تھے۔ اب ایک معاہدے کے تحت انہیں کیلیفورنیا میں تربیت دے کر جنگ زدہ یوکرین میں تعینات کرنے کا منصوبہ ہے۔ پائلٹس کو پولینڈ کے راستے یوکرین بھیجا جائے گا‘۔

فوجی اور سفارتی ذرائع نے کہا کہ اس سے یوکرین میں جاری ہماری فوجی کارروائیوں پر رتّی برابر بھی فرق نہیں پڑے گا، امریکا کی یہ کوششیں کسی حد تک یوکرین میں جاری تباہی کو تو ملتوی کر دیں گی مگر وہ حمتی نتیجے پر اثر انداز نہیں ہو پائیں گے۔

خیال رہے کہ افغانستان میں اشرف غنی کی حکومت خاتمے ہونے کے فوری بعد بری اور فضائی افواج کے سیکڑوں اہلکار ملک سے فرار ہوگئے تھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں