The news is by your side.

Advertisement

مسجد میں حملہ آور نے خود کو دھماکے سے کیسے اڑایا؟ عینی شاہد نے آنکھوں دیکھا حال بتادیا

پشاور : مسجد میں دھماکے کے عینی شاہدین نے آنکھوں دیکھا حال بتاتے ہوئے کہا حملہ آور نے منبر کے سامنے خود کو دھماکے سے اڑا دیا۔

تفصیلات کے مطابق پشاور دھماکے کے عینی شاہدین نے اے آر وائی نیوز سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ دھماکے سے پہلے فائرنگ ہوئی ، نماز جمعہ کا خطبہ ہورہا تھا اور نیچے والی جگہ اور چھت نمازیوں سے بھری ہوئی تھی۔

عینی شاہد کا کہنا تھا کہ حملہ آور نے مسجد میں داخل ہوکر سیکیورٹی اہلکاروں پر فائرکیےاور منبر کے سامنے خود کو دھماکے سے اڑا دیا۔

یاد رہے قصہ خوانی کی جامع مسجد میں نماز جمعہ کے دوران دھماکے کے نتیجے میں تیس نمازی شہید اور ساٹھ سے زائد زخمی ہوگئے۔

ترجمان لیڈی ریڈنگ اسپتال نے بتایا کہ دھماکے میں 30 افراد شہید ہوچکے ہیں جبکہ 50 سے زائد زخمی ہیں، بیشتر زخمیوں کی حالت تشویشناک ہے ، جس کے باعث خدشہ ہے کہ شہادتوں میں مزید اضافہ ہوسکتا ہے۔

ترجمان ڈاکٹر عاصم کا کہنا ہے شہر میں ریڈ الرٹ ہے، زخمیوں کو بچانے کی کوشش کر رہے ہیں، کئی کی حالت تشویشناک ہے، اس لئے اسپتال کے اضافی عملے کو بلا لیا گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں