The news is by your side.

Advertisement

پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کے خلاف کیس کی سماعت

لاہور: پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ہوشربا اضافے کیخلاف عدالت میں دائر درخواست کی سماعت ہوئی جس میں عدالت نے فریقین کو نوٹس جاری کردیئے۔

لاہور ہائی کورٹ کے جسٹس شاہد کریم نے اظہر صدیق ایڈووکیٹ کی درخواست پر سماعت کی، درخواست میں پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کیے گئے میں اضافے کو کالعدم قرار دینے کی استدعا کی گئی ہے۔

لاہور ہائی کورٹ میں سماعت کے موقع پر وفاقی حکومت، وزارت پیٹرولیم، وزارت داخلہ اور اوگرا کو نوٹس جاری کردیئے گئے۔

لاہور ہائی کورٹ نے فریقین کو2ہفتے میں تحریری جواب داخل کرنے کی ہدایت جاری کرتے ہوئے درخواست گزار کو وزیراعظم کا نام بطور فریق واپس لینے کی ہدایت کی ہے۔

یاد رہے کہ درخواست گزار نے مؤقف اختیار کیا ہے کہ عالمی منڈی کےبرعکس قیمتیں بڑھائی گئیں، قیمت بڑھانے کے لیے کابینہ سے منظوری لی گئی اور نہ ہی وجوہات بتائی گئیں، قیمتوں میں اضافے سے مہنگائی میں ہوشربا اضافہ ہوگا۔

یاد رہے شہباز حکومت کی جانب سے ایک ہفتے میں پٹرول ساٹھ روپے فی لیٹرمہنگا کر دیا، 30 روپے اضافے کے بعد پٹرول کی نئی قیمت 209 روپے 86 پیسے، ڈیزل 204 روپے 15 پیسے کا ہوگیا جبکہ مٹی کے تیل کی فی لیٹرقیمت میں 26 روپے 38 پیسے کا اضافہ ہوا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں