The news is by your side.

Advertisement

دوا ساز کمپنیوں کا انڈسٹری بند کرنے کا عندیہ

اسلام آباد : دوا ساز کمپنیوں نے انڈسٹری بند کرنے کا عندیہ دے دیا اور کہا ادویات کی عدم دستیابی سے فارما انڈسٹری کام بند کرنے پر مجبور ہوگئی ہے، وزیراعظم معاملے کا نوٹس لیکر مسئلہ حل کرائیں۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان فارماسوٹیکل مینوفیکچررزایسوسی ایشن نے انڈسٹری بند کرنے کا عندیہ دیتے ہوئے وزیراعظم عمران خان اور ڈاکٹر ظفر مرزا کو خط لکھا ، خط عبدالرزاق داؤد اور سی ای او ڈریپ کو بھی بھجوایا گیا۔

خط پی پی ایم اے نے کہا کہ بھارت سےدرآمدادویات کا خام مال تاحال بندرگاہ پرموجود ہے، درآمد ادویات کے خام مال کو تاحال کلیئرنس نہیں ملی، درآمد خام مال کو صرف این او سی جاری کیا گیا ہے۔

پی پی ایم اے کا کہنا تھا کہ گرمی کے باعث بندرگاہ پر خام مال ضائع ہونے اور خام مال کی عدم دستیابی سے اہم ادویات کی قلت کا اندیشہ ہے، ادویات کی عدم دستیابی سے فارماانڈسٹری کام بند کرنے پر مجبور ہو گی۔

خط میں کہا گیا ملک میں اہم ادویات کی قلت کی ذمہ داری انڈسٹری پرعائدنہیں ہوگ، اہم ادویات کی قلت کی ذمہ داری ڈریپ پر عائد ہو گی، خام مال کی کلیئرنس کیلئے ڈریپ حکام کو متعدد باریاد دہانی کرا چکے ہیں۔

پاکستان فارماسوٹیکل مینوفیکچررز ایسوسی نے کہا وزیراعظم معاملے کا نوٹس لیکر مسئلہ حل کرائیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں