The news is by your side.

Advertisement

کرونا وائرس سے بچنے کے لیے صرف ہاتھ دھونا کافی نہیں

ہاتھ دھوتے ہوئے 2 بار ’ہیپی برتھ ڈے ٹو یو‘ کا گانا گائیں، اتنا وقت ہاتھوں کو جراثیم سے مکمل پاک کرسکتا ہے

سوشل میڈیا پر تصاویر کا ایک مجموعہ تیزی سے وائرل ہورہا ہے جس میں ہاتھ دھونے کی اہمیت کو اجاگر کیا گیا ہے۔

کرونا وائرس کے پیش نظر عالمی ادارہ صحت نے صحت و صفائی کے بنیادی اصول اپنانے پر زور دیا ہے جن میں ہاتھ دھونا سرفہرست ہے۔

سوشل میڈیا پر وائرل مذکورہ تصاویر میں بتایا گیا ہے کہ صرف ہاتھ دھونے، اور صحیح طریقے سے ہاتھ دھونے میں فرق ہے۔

معروف امریکی اداکارہ کرسٹین بیل کی جانب سے شیئر کی گئی ان تصاویر میں دکھایا گیا ہے کہ ہاتھ نہ دھونا اور صحیح طریقے سے 30 سیکنڈز تک ہاتھ دھونا کس طرح جراثیم سے بچا سکتا ہے۔

ان مائیکرو اسکوپک تصاویر میں ہاتھ نہ دھونے، چند سیکنڈ کے لیے ہاتھ دھونے، صابن کے بغیر اور صابن کے ساتھ ہاتھ دھونے اور درست طریقے سے ہاتھ دھونے کے بعد کا فرق دکھایا گیا جس میں جراثیم کی تعداد میں واضح کمی دکھائی دے رہی ہے۔

 

View this post on Instagram

 

My mom sent me the hand washing black light comparison. 30 SECONDS WITH SOAP YALL!!!

A post shared by kristen bell (@kristenanniebell) on

برطانوی نیشنل ہیلتھ سروس کے مطابق صابن سے اچھی طرح اتنی دیر تک ہاتھ دھوئیں، جتنی دیر میں دو بار ’ہیپی برتھ ڈے ٹو یو‘ کا گانا مکمل ہوسکے۔

خیال رہے کہ برطانیہ میں اب تک کرونا وائرس کے 206 مریضوں کی تصدیق ہوچکی ہے جبکہ 2 افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔

برطانیہ سمیت کرونا وائرس 103 ممالک کو اپنی لپیٹ میں لے چکا ہے، وائرس سے متاثر افراد کی تعداد 1 لاکھ 6 ہزار 211 ہو گئی ہے۔

چین کے بعد سب سے زیادہ اموات اٹلی میں ہوئی ہیں جہاں وائرس سے ہلاک افراد کی تعداد 233 ہو گئی، دنیا بھر میں وائرس سے اموات کی تعداد 3 ہزار 600 ہوگئی ہے، جبکہ 60 ہزار 190 افراد صحتیاب ہو چکے ہیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں