The news is by your side.

Advertisement

پی کے 8303؛ حادثہ سے قبل کے اینی میشن مناظر سامنے آگئے

کراچی: پی آئی کے تباہ ہونے والے طیارے کے حادثہ سےچند منٹ قبل ریکارڈ کیے گئے اینی میشن مناظر سامنے آگئے۔

ایئرٹریفک کنٹرول اینی میشن مناظر میں دیکھا جا سکتا ہے کہ پی آئی اے کا طیارہ ایئر پورٹ پر لینڈ کرنےکےبعد دوبارہ ہوا میں بلندہوتا ہے، پائلٹ کنٹرول ٹاور کو دوبارہ لینڈنگ کرنے کی اطلاع دیتا ہے۔

کنٹرول ٹاور جہاز کو 3 ہزار فٹ کی بلندی پر رکھنے کا کہتا ہے اور طیارہ گھوم کر دوبارہ ایئر پورٹ کی طرف مڑتا ہے، اس دوران جہاز 3 ہزار کی بجائے 2 ہزار اور پھر 1800 فٹ کی بلندی پر آجاتاہے جس پر کنٹرول ٹاور پائلٹ کو کم بلندی کی وارننگ دیتا ہے۔

پائلٹ اچانک سے انجن فیل ہونے کی اطلاع دیتا ہے اور پھر “مے ڈے مے ڈے” کی کال دیتا ہےجس کے بعد طیارہ میپ سے غائب ہوجاتا ہے۔

پی آئی اے کا طیارہ 22 مئی کو کراچی ایئرپورٹ کے قریب گر کر تباہ ہو گیا تھا جس کے نتیجے میں‌ 97 افراد جاں‌ بحق ہوئے جب کہ 2 مسافر معجزانہ طور پر بچ گئے، وزیر اعظم کے حکم پر طیارہ حادثے کی فوری تحقیقات جاری ہیں۔

ایئرکموڈور عثمان غنی کی سربراہی میں 4 رکنی کمیٹی تحقیقات کر رہی ہے، ٹیم میں ونگ کمانڈر ملک محمد عمران، گروپ کیپٹن توقیر اور جوائنٹ ڈائریکٹر اے ٹی سی ناصر مجید بھی شامل ہیں، تحقیقاتی ٹیم فوری طور پر حکومت کو ابتدائی رپورٹ پیش کرے گی۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں