The news is by your side.

Advertisement

وزیراعظم کی پرویزخٹک کو نوشہرہ الیکشن دھاندلی سے متعلق شواہد اکھٹا کرنے کی ہدایت

پشاور: وزیراعظم عمران خان نے پرویزخٹک کو نوشہرہ الیکشن دھاندلی سے متعلق شواہد اکھٹا کرکے الیکشن کمیشن میں جمع کرانے کی ہدایت کردی۔

تفصیلات کے مطابق پشاور میں وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت پارلیمانی پارٹی کا اجلاس ہوا، جس میں وزیراعظم نے پرویزخٹک کو نوشہرہ الیکشن دھاندلی سے متعلق شواہد اکھٹا کرنے اور نوشہرہ الیکشن دھاندلی کی تفصیلات الیکشن کمیشن میں جمع کرانے کی ہدایت کردی۔

اجلاس میں وزیردفاع پرویزخٹک نے وزیراعظم کونوشہرہ الیکشن میں شکست کی وجوہات سےآگاہ کیا جبکہ پارلیمانی پارٹی اجلاس میں اراکین نےشکایات کے انبارلگا دیئے۔

اراکین اسمبلی نے شکوہ کیا کہ بیوروکریسی اراکین اسمبلی کوکوئی اہمیت نہیں دےرہی اور وزیراعلیٰ سیکرٹریٹ ہمارےلئے نوگو ایریابن چکاہے جبکہ تھانوں میں ایک بارپھرروایتی پولیس کلچرشروع ہوگیا ہے۔

یاد رہے تحریک انصاف کے امیدوار نے پی کے 63 نوشہرہ کے انتخابی نتائج کو چیلنج کر دیا ہے ، جس میں کہا کہ انتخابی عملے نے سیریل نمبر ،ووٹوں کی تفصیل میں واضح ردو بدل کی، فارم46کی مختلف ریکارڈپرمشتمل 2،2تصدیق شدہ کاپیاں جاری کی گئیں۔

درخواست میں کہا گیا تھا کہ ایک پولنگ اسٹیشن پر 1500 بیلٹ پیپرز غائب پائے گئے، پولنگ اسٹیشن نمبر 41میں1200بیلٹ پیپرجاری،483 ووٹ کاسٹ ہوئے، اور 717کےبجائے1317بیلٹ پیپرزریٹرننگ آفسر کو واپس کئے گئے۔

دائر درخواست میں کہا تھا کہ ایک پولنگ اسٹیشن پر1800بیلٹ پیپر جاری مگر2400 ووٹ کاسٹ ہوئے ، 40فیصدپولنگ اسٹیشنز پر بد انتظامی ،بے قاعدگیاں سامنے آئیں۔

خیال رہے نوشہرہ کے حلقہ پی کے63 کے6000 ووٹ غائب ہونے کا انکشاف سامنے آیا ، ذرائع کا کہنا تھا کہ جیت کافرق 4100 جبکہ غائب ووٹوں کی تعداد 6000 سے زائد ہے اور تصدیق شدہ فارم46 میں واضح فرق سامنے آگیا، 6000 ووٹوں کا ریکارڈ نہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں