The news is by your side.

Advertisement

معیشت مستحکم ہوگئی، ملک کو دیوالیہ ہونےسے بچا لیا: وزیر اعظم

اسلام آباد: وزیر اعظم پاکستان عمران خان نے کہا ہے کہ ملک کو دیوالیہ ہونے سے بچا لیا. کٹھن راستہ طے کر لیا۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت حکومتی رہنماؤں کا اجلاس ختم ہوگیا، اراکین کو وزیراعظم عمران خان کے تحقیقاتی کمیشن سے متعلق بریفنگ دی گئی.

احساس پروگرام کا بجٹ 100 ارب سے بڑھا کر 191 ارب تک لے گئے،عوام کوغربت کی لکیرسے اوپرلانا پی ٹی آئی کی اولین ترجیح ہے

وزیر اعظم

اس موقع پر مشیر خزانہ حفیظ شیخ نے بجٹ اورحکومتی اہداف سے متعلق آگاہ کیا، چیئرمین ایف بی آرنے ٹیکس اصلاحات اوراہداف سے متعلق بریفنگ دی.

اس موقع پر وزیر اعظم نے کہا کہ تحقیقاتی کمیشن کامقصد24 ہزار ارب قرضوں کا حساب ہے، تحقیقاتی کمیشن کا قیام جلد عمل میں لایا جا رہا ہے، تحقیقاتی کمیشن اقامہ رکھنے والوں کا حساب بھی کرے گا.

وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ پاکستان کی معیشت مستحکم ہوچکی ہے، اب وقت ہے کہ معیشت ٹیک آف کرے گی، کٹھن راستہ تھا، جو طے کیا ہے، ملک کو دیوالیہ ہونےسے بچا لیا.

پاکستان کی تاریخ کا سب سے بڑا سود دے رہے ہیں، 30 فیصد کرنٹ اکاؤنٹ خسارے میں کمی آئی ہے. ملک کے 4 ہزار ریونیومیں سے 2 ہزارقرض میں جاتا ہے.

مزید پڑھیں: وزیراعظم عمران خان نے مشترکہ مفادات کونسل کا اجلاس طلب کرلیا

اجلاس میں احساس اورغربت خاتمہ پروگرام پر بھی بات کی گئی، وزیر اعظم نے کہا کہ احساس پروگرام کا بجٹ 100 ارب سے بڑھا کر 191 ارب تک لے گئے،عوام کوغربت کی لکیرسے اوپرلانا پی ٹی آئی کی اولین ترجیح ہے.

اجلاس میں اپوزیشن گرفتاریوں پربھی بات کی گئی، موقف اختیار کیا گیا کہ گرفتارہونے والے این آر او کی تلاش میں ہیں.

کرکٹ ٹیم کو اہم مشورہ

اجلاس میں کل ہونے والے پاکستان بھارت میچ سے متعلق بھی گفتگو ہوئی۔

وزیر اعظم نے کہا کہ پاکستانی ٹیم کو دلیری دکھانا ہوگی. کھلاڑیوں کوچاہیےہارکا ڈر بھول کردلیری سےاپناکھیل کھیلیں.

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں