The news is by your side.

Advertisement

‘پاک سعودی تعلقات، وقت کی کسوٹی پرہمیشہ ثابت قدم رہے’

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ ‘نیا پاکستان’ اور ‘سعودی وژن 2030 ‘ کا مقصد ترقی کا حصول اور تجارتی روابط کا فروغ ہے۔

تفصیلات کے مطابق سعودی عرب کے جریدے ‘الریاض’ کو انٹرویو دیتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ پاکستان اور سعودی عرب کے درمیان دیرینہ اور برادرانہ تعلقات ہیں، دونوں ممالک کے تعلقات وقت کی کسوٹی پر ہمیشہ ثابت قدم رہے، ہم ان تعلقات کو سود مندتذویراتی شراکت داری میں بدلنےکےخواہاں ہیں۔

وزیراعظم نے پاکستان سعودی عرب انویسٹمنٹ فورم کے انعقاد کو خوش آئند قرار دیتے ہوئے کہا کہ دونوں ممالک تجارتی تعلقات اور سرمایہ کاری کو فروغ دینا چاہتے ہیں، فورم سے تجارت، کاروباری سرمایہ کاری میں نئی راہیں تلاش کرنےکا موقع ملا مجھے امید ہے کہ فورم نجی اور کارپوریٹ سیکٹر کو قریب لانے میں مواقع فراہم کرےگا۔

یہ بھی پڑھیں: ‏’اخلاقی اقدار کی بہتری کیلئے نبی کریم ﷺ کی سیرت بہترین ذریعہ ہے‘‏

سعودی جریدے ‘الریاض’ کو دئیے گئے انٹرویو میں وزیراعظم کا کہنا تھا کہ پاکستان اور سعودی عرب دیرپا ترقی کیلئےترجیحات جیوپولیٹیک سےجیو اکنامکس کی جانب گامزن ہیں، نیا پاکستان اور سعودی وژن 2030 سماجی اور اقتصادی اصولوں پر مبنی ہیں، نیا پاکستان اور سعودی وژن 2030 کا مقصد ترقی کاحصول،تجارتی روابط کا فروغ ہے۔

سعودی وژن دوہزار تیس کےسلسلے میں پاکستان افرادی قوت فراہم کرےگا

Comments

یہ بھی پڑھیں