The news is by your side.

Advertisement

جو کام کرے گا سسٹم میں رہے گا، جو نہیں کرے گا گھر جائے گا: وزیر اعظم

کراچی: وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے پاکستان کے پہلے کول ٹرمینل کا افتتاح کردیا۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی ایک روزہ دورے پر کراچی پہنچے جہاں انہوں نے انٹرنیشنل بلک ٹرمینل پورٹ قاسم کا افتتاح کیا۔

ٹرمینل کی افتتاحی تقریب سےخطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ کراچی میں کول اور سیمنٹ ٹرمینل بہترین معیار کا ہے۔ کول ٹرمینل 4 سال کے عرصے میں مکمل ہوا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ موجودہ حکومت نے گزشتہ حکومتوں کےمنصوبے بھی مکمل کیے اور اپنےمنصوبے بھی بہترین انداز میں مکمل کیے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ جب میں دسویں جماعت میں تھا تب لواری ٹنل کے منصوبے کے بارے میں سنتا تھا۔ لواری ٹنل کا افتتاح ذوالفقار علی بھٹو نے کیا تھا، پھر ہماری حکومت نے لواری ٹنل کو مکمل کیا۔

وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ سنہ 2013 میں حکومت آئی تو بہت سے بحران تھے۔ 4 سال میں حکومت نے 10 ہزار میگا واٹ بجلی سسٹم میں شامل کی۔ پاور پلانٹ کے منصوبےبروقت شروع کیے گئے۔ بجلی کےمسائل صرف آج ہی نہیں کل کے لیے بھی حل کیے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت آئی تو گیس نہیں تھی، فیکٹریاں بند ہو رہی تھیں۔ آج ملک بھر میں ہر فیکٹری اور گھر کو گیس مل رہی ہے۔ آئندہ سال اگست کے بعد نئے کنکشنز اور ہر جگہ گیس ملےگی۔

ان کا کہنا تھا کہ یہ واحد حکومت ہے جس نے اپنے دور میں کام شروع کیے اور مکمل بھی کیے۔ ملک بھر میں ہائی ویز اور موٹر ویز کا جال بچھا دیا گیا ہے۔ ’یہ وہ کام ہیں جس سے ووٹ نہیں ملتے، ہاں ملک ترقی ضرور کرتا ہے‘۔

وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ گورنرسندھ محمد زبیر نےاماحولیاتی مسائل کا ذکر کیا ہے۔ یہ صوبائی مسئلہ ہے لیکن وفاق ان کی بھرپور مدد کرے گا۔

اپنے خطاب میں انہوں نے مزید کہا کہ جمہوریت کے بغیر ملک ترقی نہیں کرتا اس کو سمجھ لیں، جمہوری عمل چلے گا تو خرابیاں دور ہوں گی۔ ’جو کام کرے گا سسٹم میں رہے گا، جو کام نہیں کرے گا گھر بھیج دیا جائے گا‘۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں