تازہ ترین

کوئٹہ: تفتان جانیوالی بس سے اغوا کیے گئے 9 مسافر قتل

کوئٹہ:نوشکی کے قریب تفتان جانیوالی بس سے اغوا کیے...

بہاولنگر واقعے کی مشترکہ تحقیقات ہوں گی، آئی ایس پی آر

آئی ایس پی آر نے کہا ہے کہ بہاولنگر...

عیدالفطر پر وفاقی حکومت نے عوام کو خوشخبری سنا دی

اسلام آباد: عیدالفطر کے موقع پر وفاقی حکومت نے...

ایشیائی بینک نے پاکستان میں مہنگائی میں کمی کی پیشگوئی کر دی

ایشیائی ترقیاتی بینک نے پاکستان میں آئندہ مالی سال...

سنگدل شخص نے بیوی اور 7 بچوں کو قتل کر دیا

پنجاب کے علاقے مظفر گڑھ میں اجتماعی قتل کا...

مسلم لیگ (ن) پنجاب سے سینیٹ میں اکثریتی جماعت بن گئی

لاہور: پنجاب سے سینٹ کے انتخابات میں مسلم لیگ (ن) پنجاب سے سینٹ میں اکثریتی جماعت بن کر سامنے آگئی۔

مسلم لیگ (ن) نے چار جنرل نشستیں، دو ٹیکنوکریٹ، دو خواتین اور ایک اقلیتی نشست حاصل کی۔ 7 سینیٹرز کے بلامقابلہ منتخب ہونے کے بعد پنجاب اسمبلی میں پانچ سیٹوں پر منگل کے روز ووٹنگ ہوئی۔

خواتین کی نشستوں پر (ن) لیگ کی انوشہ رحمان 125 اور بشریٰ انجم بٹ 123 ووٹ حاصل کر کے کامیاب قرار پائیں جبکہ سنی اتحاد کونسل کی صنم جاوید 102 ووٹ حاصل کر کے ناکام رہیں۔

پیپلز پارٹی کے انوشہ رحمان نے کاغذات واپس کیلیے تھے۔

اقلیتی نشست پر مسلم لیگ (ن) کے خلیل طاہر سندھو 253 ووٹ حاصل کر کے جیت گئے جبکہ سنی اتحاد کونسل کے آصف عاشق کو 99 ووٹ ملے۔

ٹیکنوکریٹ نشستوں پر محمد اورنگزیب 128 اور مصدق ملک 121 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جبکہ ڈاکٹر یاسمین راشد 106 ووٹ لے کر ناکام رہیں۔

صوبائی الیکشن کمشنر پنجاب و ریٹرننگ آفیسر اعجاز انور چوہان نے جیتنے والے تمام سینیٹرز کے ناموں کا اعلان کیا۔

پنجاب اسمبلی میں سینیٹ الیکشن میں کل 356 ووٹ کاسٹ ہوئے۔ اس سے قبل مسلم لیگ (ن) کے طلال چوہدری، احد چیمہ، پرویز رشید، ناصر بٹ جبکہ سنی اتحاد کونسل کے حامد خان، مجلس وحدت مسلمین کے راجا ناصر عباس اور آزاد امیدوار محسن نقوی بلامقابلہ منتخب ہو چکے ہیں۔

Comments

- Advertisement -